لانگ مارچ سے قبل مولانا فضل الرحمان کو گرفتار کیا جائیگایا نہیں، معاون خصوصی وزیراعظم نے واضح کردیا

لانگ مارچ سے قبل مولانا فضل الرحمان کو گرفتار کیا جائیگایا نہیں، معاون خصوصی ...
لانگ مارچ سے قبل مولانا فضل الرحمان کو گرفتار کیا جائیگایا نہیں، معاون خصوصی وزیراعظم نے واضح کردیا

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعظم کے معاون خصوصی ندیم افضل چن نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمان کولانگ مارچ سے پہلے گرفتار کیا جائے گا یا نہیں ، یہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کا کا م ہے ، بے گناہ کسی کوبھی گرفتار نہیں ہونا چاہئے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے ندیم افضل چن نے کہا کہ جس طر ح ق لیگ کیلئے بندے توڑے گئے تھے ، اس طرح تو اس وقت نہیں توڑے جارہے۔ انہوں نے کہا کہ نظریاتی کارکن کبھی نہیں ٹوٹتے ، وہ لوگ ٹوٹتے ہیں جن کو نوازا جاتاہے اوردوستیاں نبھائی جاتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کوئی سیاسی انجینئرنگ نہیں ہورہی بلکہ خود مسلم لیگ ن میں گروپ بندی موجود ہے ۔

ندیم افضل چن کا کہنا تھا کہ مجھے اس بات کا کوئی پتہ نہیں کہ مولانا فضل الرحمان کولانگ مارچ سے پہلے گرفتار کیا جائے گا یا نہیں ، یہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کا کا م ہے ، بے گناہ کسی کوبھی گرفتار نہیں ہونا چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ اس ملک میں جتنا بھی احتساب ہوا ہے اس میں ابھی تک کوئی مولوی قابو نہیں آیا اور نہ کوئی دائیں بازو کا قابو آیاہے بس حبیب جالب کوپڑھنے والے قابو آئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جہاں تک میں جانتا ہوں بلاول کبھی بھی مولانا فضل الرحمان کے ساتھ نہیں بیٹھیں گے اور نہ ہی بیٹھنا چاہئے ۔

مزید : قومی


loading...