لاہور، سابق ایکسائز انسپکٹر کے گھر سے 33کروڑ نقد، پرائز بانڈ برآمد 

    لاہور، سابق ایکسائز انسپکٹر کے گھر سے 33کروڑ نقد، پرائز بانڈ برآمد 

  

 لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت نے محکمہ ایسائز اینڈ ٹیکسیشن پنجاب کے 16گریڈ کے سابق افسر خواجہ وسیم کو24ستمبر تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کرنے کاحکم دیدیا،نیب لاہور نے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن پنجاب کے سابق گریڈ سولہ کے ملازم خواجہ وسیم کو آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں گرفتار کرکے عدالت میں پیش کیا،نیب کا موقف ہے کہ سابق انکم ٹیکس انسپکٹر کے گھر میں چھپایا گیا کروڑوں روپیہ کیش برآمد کرکے ملزم خواجہ وسیم کو گرفتار کیا گیاہے،ملزم سے 33 کروڑ کیش و پرائز بانڈز کی صورت میں برآمد بھی کرلئے گئے ہیں، نیب پراسیکیوٹر کے مطابق تحقیقات میں ملزم کے نام 22 کروڑسے زائد مالیت کے اثاثہ جات ہونے کے شواہد موصول ہوئے، اہلیہ کے نام 19 کروڑ سے زائد کیش و پرائز بانڈ ہونے کے شواہد بھی حاصل ہوئے، ملزم کے بینک اکاؤنٹس میں 2013 ء سے 2017 ء کے دوران 22 کروڑسے زائد سرمایہ بیرون ملک سے منتقل ہونے کا انکشاف ہوا ہے،عدالت سے استدعاہے کہ ملزم کو جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کیاجائے جس پر عدالت نے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد ملزم کو 24 ستمبر تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیاہے۔

نیب کارروائی

مزید :

صفحہ آخر -