11پاکستانی ہندوؤں کاقتل، بھارت تحقیقات سے آگا ہ کرے: دفتر خارجہ 

  11پاکستانی ہندوؤں کاقتل، بھارت تحقیقات سے آگا ہ کرے: دفتر خارجہ 

  

 اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان نے گزشتہ ماہ بھارتی ریاست راجھستان میں 11 پاکستانی ہندوؤں کے پراسرار قتل پر نئی دہلی سے حقائق سے آگاہ کرنے کا مطالبہ کردیا۔را جستھان کے شہر جودھ پور میں ایک ہی خاندان کے 11 پاکستانی تارکین وطن گھر میں پراسرار طور پر مردہ پائے گئے تھے۔دفتر خارجہ میں ہفتہ وار میڈیا بریفنگ میں ترجمان زاہد حفیظ چوہدری کا کہنا تھا اس معاملے پر متاثرہ خاندان کے ایک فرد کی بیٹی شری متی مکھی نے پریس کانفرنس میں الزام لگایا ہے کہ بھارتی خفیہ ایجنسی ’را‘ نے ان کے خاندان کو پاکستان مخالف ایجنٹ بننے کا کہا لیکن انکار پر انہیں قتل کردیا گیا۔ ترجمان کا کہنا تھا بھارتی پالیسیاں علاقائی امن کیلئے خطرہ ہیں، بھارت کو بارہا پاکستانی ہندوؤں کی پراسرارموت کی تحقیقات سے آگاہ کرنے کو کہا لیکن تاحال کسی قسم کی تحقیقات سے آگاہ نہیں کیا گیا۔ بھارت مسئلہ کشمیر کو بھی داخلی معاملہ قرار دے رہا تھا تاہم دنیا اسے عالمی تنازع تسلیم کرتی ہے، آج بھارت کے اندر سے مسئلہ کشمیرکے حل کیلئے آوازیں اٹھ رہی ہیں، بھارت کو یاد رکھنا چاہیے جب تک مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوتا پاکستان اور بھارت کا معاملہ اقوام متحدہ میں موجود رہیگا۔ بھارتی پالیسیاں چین اورپاکستان نہیں تمام ہمسایوں کیلئے خطرہ ہیں، بھارت میں بڑھتا اسلاموفوبیا بھی خطرناک ہے، تبلیغی جماعت کوکورونا وبا کا ذمہ دار ٹھہرایا جانا قابل مذمت ہے، وہاں کورونا کیسز تیز رفتاری سے بڑھ رہے ہیں۔ ترجمان دفتر خارجہ نے بھارتی جنرل پبن راوت کے بیان کی بھی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا انڈیا کو اس حقیقت کو تسلیم کرنا پڑے گا کہ جب تک مقبوضہ جموں وکشمیر کا معاملہ سکیورٹی کونسل کی قرادادوں کے مطابق حل نہیں ہو جاتا، یہ ا یو ان کے ایجنڈے میں شامل رہے گا۔بھارت کی اعلیٰ عسکری قیادت کی جانب سے جاری ایسے بیانات حکمران جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی اور انتہا پسند ہندو تنظیم آر ایس ایس کے ذہن کی عکاسی کرتے ہیں۔ کلبھوشن کے معاملے پر بھارت نے پاکستانی پیشکش کا جواب دیدیا ہے جس میں ایک بار پھر غیر ملکی وکیل مقرر کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ ہم جواب کا تفصیلی جائزہ لے رہے ہیں، کوئی غیر ملکی وکیل پاکستانی عدالتوں میں پیش نہیں ہو سکتا۔مقبوضہ کشمیر میں غیر قانونی لاک ڈاؤن کو گزشتہ روز 400 دن مکمل ہو گئے ہیں،وہاں ہر قسم کی آزادی سلب ہے۔ کشمیریوں کوجعلی مقابلوں میں نشانہ بنایا جا رہا ہے۔  اسلحے کا استعمال عالمی اور انسانی قوانین کی صریحاً خلاف ورزی ہے مگر بھارتی افواج مسلسل ایل او سی پر بھی فائرنگ کر رہی ہیں۔ ترجمان نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ بھا ر ت کو اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عملدرآمد کیلئے مجبور کرے۔

پاکستان مطالبہ

مزید :

صفحہ اول -