سینیٹ کی قائمہ کمیٹی ایویشن کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس ، حویلیاں طیارہ حادثہ کے پائلٹس سے متعلق حیران کن انکشاف 

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی ایویشن کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس ، حویلیاں طیارہ حادثہ کے ...
سینیٹ کی قائمہ کمیٹی ایویشن کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس ، حویلیاں طیارہ حادثہ کے پائلٹس سے متعلق حیران کن انکشاف 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )سینیٹ کی قائمہ کمیٹی ایوی ایشن کی ذیلی کمیٹی کے اجلاس کے دوران حویلیاں طیارہ حادثے کے دونوں پائلٹس کے لائسنس بھی مشکوک ہونے کا انکشاف ہواہے ، فرانزک میں دونوں پائلٹس کے لائسنس مشکوک قرار دیئے گئے ہیں ۔

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی ایوی ایشن کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس دوران ڈی جی سول ایوی ایشن نے پائلٹس کے مشکوک لائسنس کے معاملے پربریفنگ دی ، بریفنگ میں بتایا گیا کہ عدالت کے حکم پرپائلٹس کی ڈگریوں کی چھان بین کی گئی،سیکریٹری میری ٹائمزافیئرزنے معاملے کی تحقیقات کیں۔

کمیٹی کی جانب سے پائلٹس کے مشکوک لائسنس سے متعلق تحقیقاتی رپورٹ طلب کی گئی جس پر ڈی جی سول ایوی ایشن نے تحقیقاتی رپورٹ کمیٹی کو پیش نہ کرنے سے معذرت کی ۔ سیکریٹری سول ایوی ایشن نے کہا کہ تحقیقاتی رپورٹ تاحال کہیں پیش نہیں کی گئی۔ چیئرمین نے کہا کہ رپورٹ دیکھے بغیرکمیٹی کسی نتیجے پرنہیں پہنچ سکتی، قومی سلامتی کے علاوہ کسی چیزکوکمیٹی سے خفیہ نہیں رکھا جاسکتا۔ 

 اجلاس کے دوران حویلیاں طیارہ حادثے کے دونوں پائلٹس کے لائسنس بھی مشکوک ہونے کا انکشاف ہواہے ، فرانزک میں دونوں پائلٹس کے لائسنس مشکوک قرار دیئے گئے ہیں ۔پالپا کے نمائندوں کی جانب سے کمیٹی کو لائسنس معاملے پر بریفنگ بھی دی گئی جس میں کیپٹن وقاص کا کہناتھا کہ حویلیاں طیارہ حادثہ تکنیکی نوعیت کا تھا ، تحقیقاتی رپورٹ سے پہلے نام شامل کرنامناسب نہیںہے ، فہرست کے141پائلٹس میں شامل 25پائلٹس کبھی پی آئی اے کاحصہ نہیں رہے، مشکوک قرار دیئے گئے 35پائلٹس ریٹائرڈہوچکے ہیں، فرانزک تحقیقات میں 25 پائلٹس کے ریفرنس نمبرغلط ہیں،45 پائلٹس ایس اوپیزفالو نہ کرنے پرمشکوک قراردیئے گئے۔

پالپا کی جانب سے بتایا گیا کہ لائسنس سے متعلق 141 پائلٹس کو جعلی قرار دے دیا گیا، جعلی قراردیئے گئے15 پائلٹس کب کے ریٹائرڈہوچکے،جعلی قراردیئے گئے 20 پائلٹس کبھی پی آئی اے کا حصہ نہیں رہے ، 25 افراد کو غلط معلومات پرگراو¿نڈ کردیا گیا، 45 لائسنس امتحان کی تاریخ سے متعلق غلط فہمی پرجعلی قرار دیئے گئے۔ کمیٹی نے تحقیقات میں پائلٹس کو نہ سننے پرتشویش کا اظہار کیا ،چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ حیران کن بات ہے پائلٹس کو سنا تک نہیں گیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -