خاتون نرس نے پمز ہسپتال  کےڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر  کےخلاف ہراسگی کا مقدمہ درج کروا دیا،فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی قائم 

خاتون نرس نے پمز ہسپتال  کےڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر  کےخلاف ہراسگی کا مقدمہ ...
خاتون نرس نے پمز ہسپتال  کےڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر  کےخلاف ہراسگی کا مقدمہ درج کروا دیا،فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی قائم 
کیپشن:    سورس:   twitter

  

اسلام آباد(آئی این پی)  پمز ہسپتال میں خاتون نرس فرزانہ محمود نے ڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر اقبال درانی کے خلاف ہراسگی کا مقدمہ درج کروا دیا،ڈاکٹر اقبال درانی کے خلاف تھانہ کراچی کمپنی میں ایف آئی آر درج کیا گیا۔

ایف آئی آر کے مطابق میں متاثرہ نرس کا کہنا ہے کہ یکم ستمبر کو ڈاکٹر اقبال نے چپڑاسی بھیج کرکمرے میں بلوایا اور گلے لگانے کی کوشش کی۔متاثرہ نرس فرزانہ محمود نے کہا ہے کہ ڈاکٹر اقبال درانی سے نرسز کے گزشتہ 7 ماہ کے الاوئنسز پر بطور ایگزیکٹو ممبر نرسز یونین الاوئنسز کی ادائیگی کا مطالبہ کر رکھا تھا،پمز انتظامیہ نے ڈاکٹر اقبال کو بچانے کے لیے مجھے ہی شو کاز جاری کر دیا۔دوسری جانب ڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر اقبال درانی نے ضمانت قبل از گرفتاری کروالی اور خاتون کے خلاف قانونی چارہ جوئی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔پمز انتظامیہ کی جانب سے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی قائم کر دی گئی ہے۔ڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر اقبال درانی کا کہنا ہے کہ خاتون کی جانب سے مالی بے ضابطگیاں پکڑے جانے کے ڈر سے یہ ڈرامہ رچایا گیا،خاتون کے ساتھ 12 افراد کی موجودگی میں ملاقات ہوئی ۔گواہان موجود ہیں،نرس کی جانب سے کوئی ثبوت موجود نہیں, ہمارے پاس کیمروں کی ریکارڈنگ موجود  ہے،خاتون کے ساتھ اکیلے میں کبھی ملاقات نہیں ہوئی, الزامات بے بنیاد ہیں،انتظامیہ کی جانب سے قائم کردہ کمیٹی کی رپورٹ میں حقائق واضع ہوجائیں گے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -