جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے نام پر عمران خان وسیب کے عوام کو ایک لولی پوپ دے رہا ہے ، بلاول بھٹو زرداری

 جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے نام پر عمران خان وسیب کے عوام کو ایک لولی پوپ دے رہا ...
 جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے نام پر عمران خان وسیب کے عوام کو ایک لولی پوپ دے رہا ہے ، بلاول بھٹو زرداری

  

رحیم یار خان(ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے نام پر عمران خان وسیب کے عوام کو ایک لولی پوپ دے رہا ہے کیونکہ جب اس نے سیکریٹریٹ کا اعلان کیا تو اس سے ظاہر ہوگیا کہ عمران خان کبھی بھی وسیب کے عوام ان کو صوبہ نہیں دینا چاہتاتھا، پیپلزپارٹی نے خیبرپختونخواکے عوام کو شناخت دی اور پیپلزپارٹی ہی وسیب کے عوام کو ان کا صوبہ دے گی، اس ضمن میں ہم نے پہلے ہی سینیٹ سے دو تہائی اکثریت سے قانون سازی کی ہوئی ہے۔

 بہادرپور چوک رحیم یار خان میں وکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئےبلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ ظالموں کے آگے مزاحمت کی ہے، پیپلزپارٹی ہمیشہ عوام کو حقوق دلانے کے لئے عوام کے ساتھ کھڑی رہی ہے، اس وقت ایک اور ظالم ملک پر مسلط ہے جس سے ہر شہری مشکلات کا شکار ہے، عمران خان بڑے بڑے دعوے کرکے حکومت میں آیا جیسا کہ ایک کروڑ نوکریں، 50لاکھ گھر اور 90روز میں کرپشن کا خاتمہ ،یہ سارے دعوے اور وعدے جھوٹے ثابت ہوئے،روزگار دینے کی کی بجائے عمران خان نے لاکھوں افراد کو بیروزگار کر دیا، اور انکروچمنٹ کے نام پر لوگوں سے ان کی چھت چھین لی ، ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کے مطابق عمران خان کے تین سالہ دور میں پاکستان میں کرپشن میں اضافہ ہوا ہے۔

چیئرمین پی پی پی نے کہا کہ سید یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ میں منتخب کرا کر ہم نے عمران خان کی قومی اسمبلی میں اکثریت کو اقلیت میں بدل دیا تھا، ہم ابھی بھی اپوزیشن میں اپنے دوستوں سے کہتے ہیں کہ وہ کٹھ پتلی کے کٹھ پتلی عثمان بزدار کے خلاف عدم اعتماد لائیں اور اس کے بعد عمران خان کے خلاف عدم اعتماد لائیں، انہوں نے کہا کہ ہمارے دوست اپنے ووٹ کا استعمال ہی نہیں کرنا چاہتے حالانکہ ووٹ کو عزت دو کا نعرہ لگاتے ہیں ہم تو لانگ مارچ کی تیاریاں کر رہے تھے کہ ہمارے دوستوں نے اسے استعفوں کے ساتھ نتھی کر دیا، اگر وہ عدم اعتماد نہیں لا سکتے تو اپنی ہی حکمت عملی کے مطابق استعفے دے دیں، اب اس کٹھ پتلی وزیراعظم کو ہم جیالوں کی مدد سے بھگائیں گے،ہم عوام کو ایک دن کے لئے بھی اس کٹھ پتلی حکومت کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑ سکتے۔

انہوں نے کہا کہ انہیں نظر آرہا ہے کہ جیالے عمران خان کو بھگانے کے لئے تیار ہیں اور شہید ذوالفقار علی بھٹو اور شہید بینظیر بھٹو کے وعدوں کی تکمیل اور خوابوں کی تعبیر کے لئے عوامی راج قائم کرنے کے لئے بھی تیار ہیں ۔

مزید :

قومی -