کوہاٹ‘ سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق 7 ہزار سے زائد ملازمین فارغ

کوہاٹ‘ سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق 7 ہزار سے زائد ملازمین فارغ

  

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) پیپلزپارٹی کے سابق ادوار میں مختلف محکموں میں بھرتی ہونے والے سات ہزار سے زائد ملازمین کو ملازمت سے برخاست کرنے کے لئے کاروائی کی ہدایت کردی گئی واضح رہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان نے پیپلزپارٹی حکومت میں بھرتی مختلف سرکاری محکموں کے ملازمین کو برطرف کرنے کاحکم جاری کردیاہے اس وقت ملک بر میں چودہ ہزار افراد محکمہ ہائے‘ صحت اورمختلف   سرکاری محکموں میں بھرتی کرائی گئی تھی تاہم ن لیگ کی حکومت نے مرحلہ وار طورپر تمام محکموں سے مذکورہ ملازمین کو برخاست کردیا تھا جن میں صوبہ میں محکمہ تعلیم کے تقریباً چار ہزار اور دیگر محکموں کے تین ہزار سے زائد ملازمین بھی نکالے گئے تھے جس کے خلاف ملازمین نے عدالتوں سے رجوع کرلیا تھا بعدازاں مذکورہ افراد کو حکومت نے جبکہ بعض ملازمین کو عدالت کے احکامات کی روشنی میں ملازمتوں پر بحال کرلیاگیا تھا ذرائع کے مطابق عدالتی حکم نامے پر حکومت کی طرف سے سپریم کورٹ آف پاکستان میں اپیل دائر کردی گئی تھی جس پر عدالت نے حکومت کی طرف سے اپیل پر فیصلہ دیتے ہوئے اس قسم کے تمام ملازمین کی بھرتی کو خلاف ضابطہ قرار دیتے ہوئے انہیں برطرف کرنے کا جاری کیا ہے اس پس منظر میں خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے ملازمین کو بھی ملازمتوں سے نکالاجارہاہے ذرائع نے بتایا ہے کہ پہلے مرحلے میں ایجوکیشن ڈائریکٹوریٹ سمیت کئی محکموں کو اس فیصلے سے آگاہ کردیاگیاہے دوسرے مرحلے میں ان ملازمین کو ملازمتوں سے فارغ کرنے کی کاروائی شروع کی جائیگی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -