میڈیا ڈیولپمنٹ اتھارٹی بل در حقیقت میڈیا کنٹرول اتھارٹی بل ہے

    میڈیا ڈیولپمنٹ اتھارٹی بل در حقیقت میڈیا کنٹرول اتھارٹی بل ہے

  

ٹوپی(نامہ نگار)میڈیا ڈیولپمنٹ اتھارٹی بل در حقیقت میں میڈیا کنٹرول اتھارٹی بل ہے اس سے قبل کئی ڈکٹیٹر اس کوشش میں ناکام ہو چکے ہے میڈیا، سول سوسائٹی وکلا ء اور دانشوروں کو بل رکوانے کے لیے میدان میں آنا چاہیے بخت شیر اسیر تفصیل کے مطابق پریس کلب تحصیل ٹوپی کے صدر بخت شیر اسیر نے کہا کہ وفا قی وزیر اطلاعات فواد چودھر ی ڈکٹیٹر کی باقیات میں سے ہے وہ جنرل مشرف کے مشن کو تکمیل تک پہنچانا چاہتے ہے پی ٹی آئی کی حکومت ریاست کی تینوں ستونوں مقننہ،عدلیہ اور میڈیا کو مفلوج کر کے امریت کے لیے راستہ ہموار کر رہی ہے مو جو دہ حکومت سے نہ تو مہنگائی کنٹرول ہو سکتی ہے اور نہ ہی بے روزگاری پر قابو پا سکتے ہیں لہذا ایسے راستے ڈھونڈ رہی ہیں جس سے ان کی خامیاں عوام پر اشکارہ نہ  ہو سکے انہوں نے کہا کہ اس سے قبل فیلڈ مارشل محمد ایوب خان،جنرل ضیا ء الحق اور جنرل مشرف نے بھی میڈیا کنٹرول کے لیے کئی قوانین بنوائیں اور آرڈیننس جاری کئیں مگر وہ سب ناکا م ثابت ہوئی لہذا ٹیڑھے راستوں پر چلنے کے بجائے عوام کے ساتھ کئے گئے انتخابی وعدوں کو پورا کر نے پر توجہ دیں کر بل کو فلفور واپس لیں 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -