قومی ٹیبل ٹینس ٹیم کو غیرملکی دوروں سے روک دیاگیا

قومی ٹیبل ٹینس ٹیم کو غیرملکی دوروں سے روک دیاگیا

کراچی (آن لائن)ناقص سیکورٹی صورتحال کے سبب جہاں غیر ملکی ٹیمیں پاکستان آنے پر رضامند نہیں ہیں وہیں بین الصوبائی رابطے کی وزارت نے پاکستان ٹیبل ٹینس ٹیم کو بیرون ملک جانے سے روک کر انوکھی مثال قائم کردی ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق بین الصوبائی رابطے کی وزارت کے سیکشن آفیسر مظہر حسین کے دستخط سے جاری شدہ نوٹس میں ملک میں کھیلوں کی تباہی اورکرپشن میں ملوث پاکستان اسپورٹس بورڈ اور ایف آئی اے کے حکام کو ہدایت کی گئی ہے پاکستان کی ٹیبل ٹینس ٹیموں کو بیرون ملک جانے سے روک دیا جائے۔ حیرت انگیز بات یہ ہے کہ ملک میں عام انتخابات کے لیے قائم کی گئی نگراں حکومت کے وزرا بھی غیر ضروری بحث میں مبتلا ہوگئے اور ایسے اقدامات کرنے لگے ہیں جس سے نگراں حکومت کو تنقیدکا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ پاکستان ٹیبل ٹینس فیڈریشن(سبطین) گروپ کو چند ماہ قبل انٹرنیشنل ٹیبل ٹینس فیڈریشن اپنی رکن تنظیم تسلیم کرچکی ہے اور اس کی دعوت پر ہی پاکستان ٹیبل ٹینس فیڈریشن نے کامن ویلتھ چیمپئن شپ(بھارت) عالمی چیمپئن شپ(فرانس) اور ایشین ٹیبل ٹینس چیمپئن شپ(کوریا) کے لیے مردوں اور خواتین کی ٹیموں کے انتخابات اوپن ٹرائلزکے بعد مکمل کرلیے تھے۔ پاکستان ٹیبل ٹینس فیڈریشن (سبطین) گروپ کے صدر ایس ایم سبطین نے نگراں وزیراعظم میر ہزارخان کھوسو سے اپیل کی ہے کہ وہ بین الصوبائی رابطے کی وزارت کی جانب سے نکالے گئے، غیرآئینی نوٹیفکیشن کا نوٹس لیں اس وقت عالمی سطح پر ہماری تنظیم تسلیم شدہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی موجودہ ٹیم ہی بیرون ملک مقابلوں میں حصہ لے گی، ہم عدالت اور حکومت کی اجازت سے بیرون ملک مقابلوں میں شرکت کے لیے بھیجیں گے۔ دریں اثنا پاکستان ٹیبل ٹینس فیڈریشن کے نائب صدر سلیم احمد شیخ نے کہا ہے کہ بین الصوبائی رابطے کی وزارت کے سیکرٹری برائے کھیل عبدالغفار خان ملک میں کھیلوں کو تباہ کر رہے ہیں، انہیں فوری طور پر عہدے سے برطرف کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ غفار خان پاکستان اسپورٹس بورڈ کے دو ڈی جی کے ساتھ مل کر بدعنوانی میں ملوث ہیں جس کے ثبوت ایک ہفتے میں عوام کے سامنے لائے جائیں گے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی