سپریم کورٹ نے چیئرمین ایس ای سی پی کی تعیناتی کالعدم قراردیدی

سپریم کورٹ نے چیئرمین ایس ای سی پی کی تعیناتی کالعدم قراردیدی
سپریم کورٹ نے چیئرمین ایس ای سی پی کی تعیناتی کالعدم قراردیدی

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ نے سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان ( ایس ای سی پی ) کے چیئرمین محمد علی کی تقرری کالعدم قراردیتے ہوئے وفاقی حکومت کو جلد نئی تقرری کا حکم دیدیا۔ جسٹس جواد ایس خواجہ کی سربراہی میں دورکنی بنچ نے مختصر فیصلے میں سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی طرف سے ایس ای سی پی کے چیئرمین کی تقرری آرڈیننس کی دفعہ پانچ سے متصادم قراردیدی اور وفاقی حکومت کو ہدایت کی کہ نئی تقرری جلدی کی جائے ، نئی تقرری کے وقت ایس ای سی پی آرڈیننس کی دفعہ پانچ، چھ اور سات کو مدنظر رکھاجائے ۔ عدالت نے وزارت خزانہ کو ہدایت کی ایس ای سی پی کی رپورٹ پر 45دن میں عمل درآمد کرنے کی ہدایت کردی ۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں