پانامہ لیکس پر جوڈیشل کمیشن مسترد ‘ پارلیمنٹ بیرونی اشاروں پر چل رہی ہے ‘ مولانا یوسف

پانامہ لیکس پر جوڈیشل کمیشن مسترد ‘ پارلیمنٹ بیرونی اشاروں پر چل رہی ہے ‘ ...

ملتان ‘ بہاولپور ( سٹی رپورٹر ‘ ڈسٹرکٹ رپورٹر )جمعیت علماء اسلام (س ) کے پی کے امیر مولانا یوسف شاہ نے کہا ہے کہ پانامہ لیکس پر بنائے گئے جوڈیشل کمیشن کو مسترد کرتے ہیں کیونکہ ایک ریٹائر جج ایک شہری کو طلب نہیں کرسکتا تو وہ کیسے میاں نواز شریف کو گرفتار کرے گا اسی لئے چیف جسٹس آف پاکستان حاضر سروس ججز پر مشتمل کمیشن تشکیل دیں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مدرسہ مدینتہ العلوم سوتری(بقیہ نمبر63صفحہ12پر )

وٹ میں پریس کا نفرنس سے خطاب کرتے ہو ئے کیا اس موقع پر جے یو آئی (س) کے ضلعی امیر مفتی ممتاز قاسمی اور نائب امیر مولانا عبد الحق بھی ہمراہ تھے مولانا یوسف شاہ نے مزید کہا کہ پارلیمنٹ غیر ملکی آقاؤں کے اشاروں پر چل رہی ہے دوسری طرف ناقص خارجہ پالیسی کی وجہ سے ہم ناکام ہو چکے ہیں ‘کرپشن کرنے والوں کے خلاف ہمیں متحد ہونا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ پورے پنجاب میں مدارس و مساجد کے خلاف آپریشن کیا گیا لیکن کسی ایک مدرسے یا مسجد سے ایک چاقو بھی برآمد نہیں کیا گیا اس سے ثابت ہو تا ہے کہ مدارس کا دہشت گردی سے کوئی تعلق نہیں ہے۔دریں اثناء حکومت کی ناقص خارجہ پالیسی کے باعث مودی کو سعودی عرب ایوراڈ دے رہاہے ملک بھرکے تمام علماء کرام کو مولانا فضل الرحمان کے موقف پرانتہائی افسوس ہے جوبیان پرویز رشید نے دیناتھا وہ بیان مولانا فضل الرحمان نے دیدیا ان خیالات کااظہار جمعیت علماء اسلام (س) کے مرکزی رہنما مولانایوسف نے بہاول پورمیں میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کیا انہوں نے کہاکہ حکمران ملک کوتباہی کی طرف لے جارہے ہیں بیرونی طاقتیں جوکام مشرف سے نہ کراسکے وہ کام نوازشریف سے باآسانی کروانے میں کامیاب ہوگئے ہیں انہوں نے کہاکہ لبرل پاکستان کانعرہ غداری کے زمرے میں آتاہے ۔ انہوں نے جنرل راحیل شریف سے مطالبہ کیا کہ اقتصادی دہشت گردوں کے خلاف بھی کریک ڈاؤن کرتے ہوئے انہیں گرفتار کیاجائے۔ انہوں نے کہاکہ جے یوآئی س اول روز سے ہی حقوق نسواں بل کی مخالف تھی اورجب تک حکومت اس بل کوواپس نہیں لیتی ہماری آئینی وجمہوری جدوجہد جاری رہے گی۔انہوں نے کہاکہ بلوچستان سے را کے ایجنڈ کی گرفتاری پر حکومت کی خاموشی معنی خیز ہے جبکہ اس کی گرفتاری سے واضح ہوگیاکہ بھارت پاکستان میں دہشت گردی خودکش حملوں میں ملوث ہے۔ اس موقع پر جے یوآئی (ف) کے ڈویژنل امیر مفتی ارشاداحمد‘ ضلعی جنرل سیکریٹری مفتی محمداحمدمحمودی ‘ ڈویژنل ترجمان مولانا صہیب احمد ودیگر ضلعی قائدین حاجی محمداقبال ‘قاری محمداحمدرحیمی‘ قاری محمدصفدر‘ قاری مشتاق احمد‘ قاری راشدمحمودانصاری‘مولانا حفیظ اللہ ودیگرموجودتھے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر