109غیر قانونی ہاؤسنگ سکیموں کے خلاف کارروائی سوالیہ نشان

109غیر قانونی ہاؤسنگ سکیموں کے خلاف کارروائی سوالیہ نشان

  

لاہور(عامر بٹ سے)ایل ڈی اے کی حدود میں واقع 109غیر قانونی ہاؤسنگ سکیموں کے خلاف تاحال کوئی کارروائی عمل میں نہ لائی جاسکی،ایل ڈی اے ایکٹ 1975صرف کاغذی کارروائیوں تک محدود کر دیاگیا،ہزاروں شہری ان سوسائٹیوں میں خرید و فروخت کرکے اپنی زندگی بھر کی جمع پونجی داؤ پر لگا بیٹھے، شعبہ ٹاؤن پلاننگ کا عملہ صرف سب اچھا کی رپورٹ دینے میں مصروف ہوگیا تفصیلات کے مطابق لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی حدود میں آنے والی 109 ایسی غیر قانونی ہاؤسنگ سکمیں ہیں جو کہ ایل ڈی کی طرف سے منظور شدہ نہیں ہیں،ایل ڈی اے کے نوٹس میں ہونے کے باوجود ان سوسائٹیوں کے خلاف ایل ڈی اے ایکٹ 1975 کے تحت کارروائی سے اجتناب برتا جار ہاہے۔ایل ڈی اے قوانین کے مطابق کسی بھی سکیم میں اس وقت تک پلاٹ نہیں خرید ا جا سکتا ہے جب تک ایل ڈی اے  کی طرف سے اس کی منظوری نہیں دی جاتی۔ اس مقصد کے لئے ایل ڈی اے کے دفتر جوہر ٹاؤن میں قائم ون ونڈو سیل کاخصوصی کاؤنٹر بھی قائم کیا گیا۔ شعبہ میٹرو پولیٹن پلاننگ کاعملہ ان کی خدمت اور معاونت کے دعوؤں کے برعکس صرف سب اچھا کی رپورٹ دینے میں مصروف ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -