ایک مہینے میں مقدمات نمٹانے کا ٹارگٹ پورا کیا جائے، چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ 

  ایک مہینے میں مقدمات نمٹانے کا ٹارگٹ پورا کیا جائے، چیف جسٹس لاہور ...

  

 لاہور(نامہ نگار)چیف جسٹس لاہورہائی کورٹ مسٹرجسٹس محمد امیر بھٹی نے سیشن، گارڈین اور فیملی مقدمات کو جلد نمٹانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاہے کہ ایک مہینے میں مقدمات نمٹانے کا ٹارگٹ پورا کیا جائے،چیف جسٹس نے سیشن، فیملی اور گارڈین مقدمات کو نمٹانے کا ٹارگٹ پورا کرنے والے سیشن ججوں کوسراہا جبکہ مقدمات کو نمٹانے کا ٹارگٹ پورا نہ کرنے والے اضلاع کے سیشن ججز کو ایک ماہ میں مقدمات نمٹانے کی ہدایت جاری کردی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق بہاولنگر، بھکر، چنیوٹ، جہلم، خانیوال، خوشاب، لیہ، لودھراں، منڈی بہاؤالدین، میانوالی، ننکانہ صاحب، نارووال، پاکپتن، رحیم یار خان، راجن پور، ساہیوال، چکوال، حافظ آباد، قصور، مظفر گڑھ، اوکاڑہ، سرگودھا، شیخوپورہ اور وہاڑی کے اضلاع نے 2019 تک کے دائر فیملی مقدمات کے فیصلے کرنے کا ٹارگٹ پورا کیا ہے۔ جبکہ ٹارگٹ پورا نہ کرنے والے والے اضلاع اٹک، بہاولپور، ڈی جی خان، گوجرانوالہ، گجرات، جھنگ، لاہور، ملتان، راولپنڈی، سیالکوٹ اور ٹوبہ ٹیک سنگھ کے سیشن ججز کو ہدایت جاری کی گئی ہیں کہ 2019 تک دائر فیملی مقدمات کے ایک مہینے میں فیصلے یقینی بنائے جائیں۔ اسی طرح بہاولنگر، بھکر،چکوال، چنیوٹ، حافظ آباد، جہلم، قصور، خانیوال، خوشاب، لیہ، لودھراں، جھنگ، منڈی بہاؤالدین، میانوالی، مظفر گڑھ، ننکانہ صاحب، نارووال، اوکاڑہ، پاکپتن، رحیم یار خان، راجن پور، ساہیوال، سرگودھا اور وہاڑی کے اضلاع میں 2019 تک دائر گارڈین مقدمات کے فیصلے کرنے کا ٹارگٹ پورا کیا گیا ہے۔ فاضل چیف جسٹس کی جانب سے متذکرہ اضلاع کے ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججزکو تعریفی ریمارکس بھیجے گئے ہیں جبکہ بہاولپور، فیصل آباد، گجرات، لاہور، ملتان، راولپنڈی، سیالکوٹ اور ٹوبہ ٹیک سنگھ میں متذکرہ ٹارگٹ پورا نہ کرنے کی وجہ سے ہدایت جاری کی گئی ہے کہ ایک مہینے کے اندر اندر 2019 تک دائر گارڈین مقدمات کے فیصلے کرنے کا ٹارگٹ پورا کیا جائے۔ علاوہ ازیں چیف جسٹس محمد امیر بھٹی کی ہدایات پر عملدرآمد کرتے ہوئے بہاولنگر، بھکر، چنیوٹ، ڈی جی خان، جہلم، خوشاب، منڈی بہاؤالدین، رحیم یار خان، راجن پور، ساہیوال، جھنگ، لیہ، ننکانہ صاحب، نارووال، راولپنڈی، شیخوپورہ اور وہاڑی کے اضلاع میں 2017 تک کے سیشن مقدمات کے فیصلے کرنے کا ٹارگٹ پورا کیا گیا   فاضل چیف جسٹس کی جانب سے متذکرہ اضلاع کے سیشن ججز اور جوڈیشل افسران کی کارکردگی کو سراہا گیا   جبکہ2017 تک کے سیشن مقدمات کو نمٹانے کا ٹارگٹ پورا نہ کرنے والے اضلاع کو ایک مہینے میں ٹارگٹ پورا کرنے کی ہدایت کی گئی  مقدمات نہ نمٹانے والے اضلاع میں اٹک، بہاولپور، فیصل آباد، گوجرانوالہ، گجرات، حافظ آباد، قصور، خانیوال، لاہور، لودھراں، میانوالی، ملتان، مظفرگڑھ، اوکاڑہ، پاکپتن، سرگودھا، سیالکوٹ اور ٹوبہ ٹیک سنگھ شامل ہیں۔

چیف جسٹس

مزید :

صفحہ آخر -