پاکستان کے سیاسی بحران کا پاک افغان تعلقات پر کوئی اثر نہیں: افغان ترجمان 

پاکستان کے سیاسی بحران کا پاک افغان تعلقات پر کوئی اثر نہیں: افغان ترجمان 

  

       کابل(آئی این پی)عمران خان کی حکومت کے خاتمے پر روس کے بعد اب افغان طالبان نے بھی اپنا موقف پیش کردیا ہے۔گزشتہ برس طالبان کے برسراقتدار آنے کے بعد سابق وزیر اعظم عمران خان نے ہر فورم پر افغانستان کے مسائل اور مقامی ثقافت کی روشنی میں ان کے حل کو اجاگر کیا۔پاکستان ہی کی کوششوں سے اسلام آباد میں او آئی سی کی وزرائے خارجہ کا خصوصی اجلاس ہوا، جس میں افغانستان کو درپیش مسائل کے حل پر زور دیا گیا۔عمران خان کی حکومت کے خاتمے کے بعد اب طالبان حکومت نے بھی اپنا موقف پیش کردیا ہے۔اس حوالے سے افغان طالبان حکومت کے نائب ترجمان انعام اللہ سمنگانی نے کہا ہے کہ افغان حکومت دونوں ممالک کے درمیان اچھے اقتصادی اور سیاسی تعلقات کی خواہاں ہے۔انعام اللہ سمنگانی نے کہا کہ پاکستان کے موجودہ سیاسی بحران کا افغانستان اور پاکستان کے تعلقات پر کوئی خاص اثر نہیں پڑے گا۔دوسری جانب افغان تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ پاکستان میں سیاسی بحران افغانستان کے عوام اور حکومت کے معاشی تعلقات کو متاثر کرے گا۔

افغان ترجمان 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -