بھارت نے جموں و کشمیر کی آزادی و خودمختاری کو چھینا ‘محمد یاسین

بھارت نے جموں و کشمیر کی آزادی و خودمختاری کو چھینا ‘محمد یاسین

سری نگر (کے پی آئی ) جموں و کشمیر لبرےشن فرنٹ کے چیرمین محمد یاسین ملک نے کشمیری عوام کی طرف سے15 بھارتی ےوم آزادی پراگست کو بطور یوم سیاہ منانے کو فطری عمل قرار دیتے ہوئے کہا کہ آزادی حاصل کرنے کے بعد بھارت نے جموں و کشمیر کی آزادی و خودمختاری کو چھین لیا۔ انہوں نے جموں کشمیر کو ایک سلگتا ہوا مسئلہ قرار دیتے ہوئے واضح کیا کہ اس مسئلے کو حل کئے بنا برصغیر میں امن ،استحکام،تعمیر،ترقی اور دوستی کو فروغ نہیں مل سکتا۔ملک یاسین نے کہا کہ آزادی کی نعمت سے بہرہ مند ہونے کی خواہش رکھنے والے کشمیری دنیا میں امن و امان کے حامی ہیں۔ یاسین ملک نے ترال قصبہ میںمنعقدہ ایک عوامی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں برصغیر ہندو پاک آزادی کی نعمت سے سرفراز ہوئے۔ملک یاسین نے کہا کہ اپنی آزادی کے حصول کے محض چند دنوں کے بعدہی بھارت کی قیادت نے ایک چھوٹے سے خطے جسے فردوس برروئے زمین کہا جاتا تھا ،کی آزادی کو سلب کرنے کیلئے فوجی چڑھائی کردی۔انہوں نے کہا کہ جموں کشمیر کو اپنے زیر تسلط لانے کیلئے بھارت نے وہی جابرانہ اور ظالمانہ ہتھکنڈے آزمانے شروع کردئے جس کا سامنا خود انہوں نے برسہا برس تک کیا تھا۔ملک یاسین کا کہنا تھا کہ بھارت آزاد ہوگیا لیکن جموں کشمیر کی آزادی و خودمختاری کو چھین لینے میں اس نے کوئی عار یا شرم محسوس نہیں کی ۔ اس پر مستزادیہ کہ جب کشمیریوں نے اس جبری تسلط کے خلاف مزاحمت کی تو بھارت خود اس کیس کواقوام متحدہ میں لے گیا جہاں اس نے پوری دنیا کے سامنے کشمیریوں کے حق آزادی کو تسلیم کرتے ہوئے انہیں حق خوداردیت دینے کا وعدہ کیا۔ملک یاسین کے بقول یہی نہیں بھارت کے پہلے وزیر اعظم آنجہانی جواہر لال نہرو نے بھارتی پارلیمان اور کشمیر کے مرکز لال چوک میں عوامی اجتماع میں اسی وعدے کو دہرایا ۔لیکن جب جب کشمیریوں نے بھارت سے اپنے وعدے ایفا کرنے کی مانگ کی تو ان پر جبر و ظلم کے ہتھکنڈے آزمائے گئے۔ انہوں نے کہا کہ دہلی کے تہاڑ جیل میں تختہ دار پر شہادت بابائے قوم محمد مقبول بٹ سے لیکر شہید شیخ عبدالعزیز جنہیں کے عوامی انقلاب کے دوران شہید کیا گیا نیز پچھلی دو دہایﺅں میں اس سرزمین کے لاکھوں جیالوں کی شہادت کے واقعات ہماری اسی خونین تاریخ کے نشانات ہیں۔ ملک یاسین نے کہا کہ کشمیری دنیا کی ہر قوم اور ہر ملک کی آزادی کیلئے نیک خواہشات رکھتے ہیں لیکن جس ملک نے پچھلی چھ دہایﺅں سے ہماری آزادی کو طاقت ،ترغیب،تحریص،ترہیب اور جبر کے بل پر چھین رکھا ہے، اسے اس کے یوم آزادی پر سچ کا آئینہ دکھانا بھی ضروری ہے۔ملک یاسین نے کہا کہ اسی لئے دنیا بھر میں کشمیری جہاں جہاں رہتے ہیں وہ بھارت کے یوم آزادی اگست کو اپنے لئے یوم سیاہ تصور کرتے ہیں اور اپنے پرامن احتجاج،ہڑتال اور آواز کے زریعے اقوام عالم تک یہ پیغام پہنچاتے ہیں کہ جموں کشمیر ایک سلگتا ہوا مسئلہ ہے جسے حل کئے بنا دنیا اور برصغیر میں امن ،استحکام،تعمیر،ترقی اور دوستی کو فروغ نہیں مل سکتا بلکہ اس کا خواب دیکھنا بھی محال ہے۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...