اسرائیل کی نسلی دیوار اور یہودی بستیوں کی تعمیر کےخلاف فلسطینی شہریوں کے مظاہرے

اسرائیل کی نسلی دیوار اور یہودی بستیوں کی تعمیر کےخلاف فلسطینی شہریوں کے ...

رام اللہ (ثناءنیوز )فلسطین کے مقبوضہ علاقے مغربی کنارے کے مختلف شہروں میں اسرائیل کی نسلی دیوار اور یہودی بستیوں کی تعمیر کے خلاف فلسطینی شہریوں نے مظاہرے کئے۔ مظاہرین پر صہیونی فوج نے طاقت کا اندھا دھند استعمال کیا ہے جس کے نتیجے میں درجنوں افراد زخمی بتائے جاتے ہیں۔ زخمیوں میں کئی غیر ملکی انسانی حقوق کے مندوبین بھی شامل ہیں۔ مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق جمعہ کے روز نمازجمعہ کے اجتماعات کے بعد مغربی کنارے کے مرکزی شہر رام اللہ، اس کے نواحی علاقوں النبی صالح، نعلین، بلعین، نابلس، قلقیلیہ المعصرہ اور الخلیل میں دیگر مقامات پر احتجاجی جلوس نکالے گئے۔ مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق المعصرہ اور کفرقدم میں نکالی گئی۔ دو ریلیوں پر اسرائیلی فوج نے آنسو گیس کی وحشیانہ شیلنگ کی جس کے نتیجے میں درجنوں افراد زخمی بتائے جاتے ہیں۔ زخمیوں انتیس سالہ یحیی شاکر اشتیوی کی حالت تشویشناک بیان کی جاتی ہے۔ طبی ذرائع کے مطابق اشتیوی کے سرمیں اشک آور گیس کا گولہ لگا ہے جس سے اس کا سر شدید زخمی ہو گیا ہے۔کفر قدم میں احتجاجی مظاہرے میں درجنوں غیر ملکی شہری بھی شریک تھے۔ انہوں نے گذشتہ دس سال سے شہر کے بند شاہراہ کی جانب مارچ کیا تو راستے میں تعینات صہیونی ملٹری پولیس نے ان پر ربڑ کی گولیاں چلائیں۔المعصرہ میں اسرائیلی فوجیوں اور فلسطینی مظاہرین کے درمیان جھڑپوں کی بھی اطلاعات ہیں۔ فلسطینی مظاہرین نے صہیونی فوجیوں کی گاڑیوں پر پتھرا و¿کیا ہے۔ جس کے نتیجے میں متعدد فوجی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا۔ مغربی کنارے کے دیگر شہروں میں بھی صہیونی فوجیوں اور فلسطینی مظاہرین کے درمیان جھڑپوں کی اطلاعات ہیں۔ مشتعل مظاہرین اور قابض فوج کے درمیان جھڑپوں میں کئی فلسطینی شہری زخمی ہوئے ہیں جنہیں فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔wa...pr...riz

مزید : عالمی منظر