بے قابو ٹرالرا لٹنے سے ڈرائیور اور ہیلپر ‘کار تلے آکر 3سالہ بچی جاں بحق

بے قابو ٹرالرا لٹنے سے ڈرائیور اور ہیلپر ‘کار تلے آکر 3سالہ بچی جاں بحق

لاہور(سپیشل رپورٹر)راوی روڈ کے علاقہ بتی چوک کے قریب ڈرائیور کو اونگھ آ جانے کے باعث ٹی آئرن اور سریے سے لدا ٹرالر بے قابو ہو کر الٹ گیا جس کے نتیجہ میںٹرالے میں سوار ڈرائیور اور ہیلپر موقعہ پر ہی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے، واقعہ کی اطلاع ملنے پر پولیس اور دیگر امدادی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئی جہاں انہوں نے گھنٹوں کی کوششوں کے بعد کرین کے ذریعے ٹرالر کو ہٹا کر وہاں سے دونوں متوفین کی نعشوں کو کو نکال کر انہیں ضروری کارروائی کرتے ہوئے ان کے ورثاءکے حوالے کردیا ہے جبکہ بادامی باغ ، شمالی چھاﺅنی اور فیروزپور روڈ پر ہونے والے دیگر خونیں ٹریفک حادثات میں معصوم بچی سمیت تین افراد ہلاک ہوگئے۔ پولیس نے ضروری کارروائی کے بعد ان تینوں متوفین کی نعشیں ان کے ورثاءکے حوالے کردیا ہے۔ معلوم ہواہے کہ کوہاٹ کا رہائشی 30 سالہ وسیم روشن اپنے ٹریکٹر ٹرالے نمبر 5139 پر لوہے کے سریے اور ٹی آئرن لوڈ کرکے اپنے ہیلپر 28 سالہ نوشیر علی عنایت کے ہمراہ بادامی باغ کی جانب جا رہا تھا کہ بتی چوک راوی روڈ کے قریب اسے اونگھ آ جانے کے باعث ٹرالہ بے قابو ہو کر الٹ گیا جس کی وجہ سے یہ دونوں بھی ٹرالے کے نیچے دب گئے اور موقع پر ہی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے۔ یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اس حادثے کی اطلاع ملنے پر تھانہ شاہدرہ، شفیق آباد اور راوی روڈ کی پولیس موقع پر پہنچی جہاں انہوں نے ابتدائی طور پر امدادی کارروائی شروع کرنے کے بجائے اپنی اپنی حدود کا انچوں کے حساب سے تعین کرنا شروع کر دیا بعدازاں مقامی افراد کے احتجاج پر مذکورہ پولیس اہلکاروں نے ریسکیو 1122 اور دیگر امدادی ٹیموں کو وہاں بلوا لیا جنہوں نے پولیس لائن سے آنے والی کرین کے ذریعے گھنٹوں کی جدوجہد کے بعد دونوں نعشوں کو ٹرالے کے نیچے سے نکال کر پولیس کے حوالے کردیا۔ راوی روڈ پولیس نے ابتدائی طور پر دونوں متوفین کی نعشوں کو اپنے قبضے میں لیتے ہوئے پوسٹمارٹم کیلئے مردہ خانے میں جمع کروا دیا۔ جہاں بعدازاں ان کے ورثاءکے آنے پر پولیس نے ضروری کارروائی کرتے ہوئے نعشیں ان کے حوالے کردیں۔ پولیس کے مطابق متوفی نوشیر علی ننکانہ کے علاقہ قلعہ میاں سنگھ کا رہائشی جبکہ ٹرالے کا ڈرائیور وسیم روشن کوہاٹ کا رہائشی تھا۔ دریں اثنا بادامی باغ کے علاقہ لوہے والی پلی کے قریب رہائش پذیر ابوسردار کی تین سالہ بیٹی خدیجہ گھر کے باہر کھیلتے ہوئے گاڑی کی زد میں آ کر زخمی ہوگئی جسے طبی امداد کیلئے ہسپتال لے جایا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی۔ شمالی چھاﺅنی کے علاقہ صدر گول چکر کے قریب دو روز قبل ہونے والے ٹریفک حادثے میں زخمی ہونے والا 55 سالہ عبدالحفیظ اور فیروزپور روڈ پر سڑک عبور کرتے ہوئے گاڑی کی زد میں آ کر زخمی ہونے والا اٹھارہ سالہ مامون بھی گزشتہ روز ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔ پولیس نے ضروری کارروائی کرتے ہوئے تینوں متوفین کی نعشوں کو ان کے ورثاءکے حوالے کر دیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...