امریکہ: مسلمان فوجی کو بم حملے کی سازش پر عمرقید کی سزا

امریکہ: مسلمان فوجی کو بم حملے کی سازش پر عمرقید کی سزا

آسٹن (آئی این پی) امر یکہ میں ایک مسلمان فوجی کو ریاست ٹیکساس کے فوجی اڈے پر دوسرے فوجیوں اور ان کے خاندانوں کو بم حملے میں قتل کرنے کی سازش کے الزام میں قصور وار قرار دے کر عمر قید کی سزا سنادی گئی۔ 22 سالہ مسلمان امریکی فوجی ناصر عبدو پر ریاست ٹیکساس کے دارالحکومت آسٹن کے نواح میں واقع فورٹ ہڈ کے فوجی اڈے پرفوجیوں اور ان کے خاندانوں پر بم حملے کی منصوبہ بندی کے الزام میں مقدمہ چلایا گیا ۔عدالت میں فیصلہ سنانے کے وقت عبدو کو اس کا چہرہ ڈھانپ کر پیش کیا گیا جہاں اس نے ایک طویل بیان ریکارڈ کرایا اور کہا کہ وہ اپنی باقی زندگی جہاد کو جاری رکھے گا۔اس نوجوان فوجی نے کہا کہ میں عدالت سے رحم کی درخواست نہیں کروں گا کیونکہ صرف اللہ ہی کی ذات رحم کرنے والی ہے ۔مقدمے کی سماعت کے دوران عبدو نے خود ہی اپنا دفاع کیا ہے اور کسی وکیل کی خدمات حاصل نہیں کیں۔ اس نے عدالت میں تفصیل سے وہ حالات بیان کیے جن کی وجہ سے وہ انفینٹری کے ایک سپاہی سے جہادی بن گیا تھا۔اس پر مئی میں فوجی اڈے کے نزدیک واقع ایک مشہور چینی ریستوران کو بم سے اڑانے کی سازش کے الزام میں فرد جرم عاید کی گئی تھی۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...