بھارتی پولیس کشمیری نوجوانوں کو دیوار کے ساتھ لگا رہی ہے ‘ کشمیرڈاکٹرز ایسو سی ایشن

بھارتی پولیس کشمیری نوجوانوں کو دیوار کے ساتھ لگا رہی ہے ‘ کشمیرڈاکٹرز ایسو ...

سرینگر(آن لائن) مقبوضہ کشمیرمیںڈاکٹرز ایسو سی ایشن کشمیر کے صدر ڈاکٹر نثار الحسن نے پٹن کے علاقے کریری میں بھارتی پولیس اہلکاروں کی طرف سے دسویں جماعت کے طالب علم پرتشددکی شدیدمذمت کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر میں پولیس غنڈوں جیسا سلوک کررہی ہی۔ ڈاکٹر نثار الحسن نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہاکہ پولیس اہلکار مقبوضہ علاقے میں کشمیری نوجوانوں کو ظلم و تشددکا نشانہ بنانے کی ایک منظم مہم چلار ہے ہیںاور قابض انتظامیہ نے اس سلسلے میں انہیں کھلی چھوٹ دے رکھی ہے ۔انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو ایک پالیسی کے تحت نشانہ بنایا جارہا ہے ۔اور انہیں اپنے جذبات کے اظہارکے حق سے محروم رکھا جارہا ہے ۔انہوںنے افسوس ظاہر کیا کہ پولیس کشمیری نوجوانوں کو جھوٹے مقدمات میں ملوث کر کے غیر قانونی طورپر نظربند کر رہی ہے اور ظلم و زیاتیوں کے خلاف آواز بلند کرنے انہیں وحشیانہ تشددکا نشانہ بنایا جارہا ہے ۔

انہوںنے کہا کہ پولیس نوجوانوں کو علاج معالجے کی بھی اجازت نہیں دے رہی ہے اور انہیں دیوار کے ساتھ لگانے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ ڈاکٹر نثار الحسن نے کہاکہ نوجوانوںکے ساتھ پولیس کے اس رویہ کے خطرناک نتائج برآمد ہونگی۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...