عراق کرد سکیورٹی فورسز کا دو قصبے آزاد کرانے کا دعویٰ

عراق کرد سکیورٹی فورسز کا دو قصبے آزاد کرانے کا دعویٰ

                          بغداد (این این آئی)عراق کے شمال میں کرد سکیورٹی فورسز نے اسلامی ریاست کے شدت پسندوں کے زیرقبضہ دو قصبے آزاد کرانے کا دعویٰ کیا ہے۔میڈیا رپور ٹ کے مطابق کرد حکام نے بتایا کہ امریکہ کی فضائی مدد کے ذریعے مکھمور اور گویر پر دوبارہ کنٹرول حاصل کر لیا میڈیا رپورٹ کے مطابق شدت پسندوں پر امریکی فضائی حملوں کی وجہ سے کرد سکیورٹی فورسز کامیابیاں حاصل کر رہی ہیں اس سے پہلے عراق میں اسلامی ریاست کے شدت پسند ڈرامائی طور پر غیر معمولی پیش قدمی کرتے ہوئے علاقوں پر قبضہ کر رہے تھے تاہم اب امریکی فضائی حملوں سے اس پیش قدمی کو روکنے میں مدد ملے گی اس سے پہلے کردستان کی علاقائی حکومت کے صدر مسعود برزانی نے شدت پسندوں کو شکست دینے کےلئے بین الاقوامی برادری سے عسکری امداد کی اپیل کی تھی۔انھوں نے کہا کہ ہم دہشت گرد تنظیم سے لڑ رہے ہیں، ہم ایک دہشت گرد ریاست سے لڑ رہے ہیں، اسلامی ریاست کے شدت پسندوں کے پاس ہماری پیش مرگ فوج کے مقابلے میں زیادہ جدید ہتھیار ہیں۔دوسری جانب فرانس کے وزیرِ خارجہ لوراں فیبیوس نے کہا ہے کہ عراق کو دولتِ اسلامیہ کے شدت پسند جنگجوو¿ں کا مقابلہ کرنے کےلئے وسیع البنیاد قومی حکومت کی ضرورت ہے۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...