ملک یا سسٹم کو نقصان پہنچا تو عمران خان اور طاہر القادری ذمہ دار ہونگے،خورشید شاہ

ملک یا سسٹم کو نقصان پہنچا تو عمران خان اور طاہر القادری ذمہ دار ...

                               اسلام آباد(اے این این) قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے کہا ہے کہ ملک یا سسٹم کو نقصان پہنچا تو عمران خان اور طاہر القادری ذمہ دار ہونگے،تشدد کی دھمکیاں جمہوری نظام کے لئے خطرے کا باعث بن سکتی ہیں،الیکشن کے بعد سب جماعتوں نے نواز شریف کو وزیر اعظم تسلیم کیا،اب کیسے انکار کیا جا سکتا ہے،تحریک انصاف کے کچھ لوگ خود لیڈر بننے کے لئے عمران خان کو استعمال کر رہے ہیں۔اسلام آباد میں میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ عمران خان اور طاہر القادری ایک ہیں اور دونوں ملک کو تباہی کی طرف لے کر جارہے ہیں۔تشدد کی دھمکیاں جمہوری نظام کیلئے خطرے کا باعث بن سکتی ہیں۔انھوں نے کہا کہ ملک یا جمہوری سسٹم کو نقصان پہنچا تو اس کے ذمہ دار عمران خان اور طاہرالقادری ہونگے۔انھوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے کچھ لوگ عمران خان کو استعمال کررہے ہیں، وہ سمجھتے ہیں کہ عمران خان کے بعد وہ لیڈر بن سکتے ہیں۔ خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ گزشتہ انتخابات کے بعد ملک کی تمام جماعتوں نے نواز شریف کو وزیراعظم تسلیم کیا، 14 ماہ بعد نواز شریف کو وزیراعظم کیسے نہ تسلیم کیا جائے۔ موجودہ معاملات پرخاموش رہنا بے حسی ہے جو تباہی کی طرف لے جائے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ ملک کا مستقبل جمہوریت ہے اور پیپلزپارٹی غیر جمہوری اقدام کے خلاف مزاحمت کرے گی۔انہوں نے سوال کیا کہ یوم شہدا کے دوران قادری کی اشتعال انگیز تقریرکے نتیجے میں اگر ملک میں انتشار پیدا ہوتا ہے تو اس کا ذمہ دار کون ہوگا۔خورشید شاہ نے کہا کہ صرف وہ جماعتیں جمہوری نظام کو پٹڑی سے اتارنے کیلئے جوابدہ ہوں گی جو عوام کو تشدد پر اکسا رہی ہیں

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...