نوسرباز کے ہاتھوں لٹنے والا شہری تھانوں کے چکر لگانے پر مجبور

نوسرباز کے ہاتھوں لٹنے والا شہری تھانوں کے چکر لگانے پر مجبور
 نوسرباز کے ہاتھوں لٹنے والا شہری تھانوں کے چکر لگانے پر مجبور

  


لاہور(کرائم سیل)نوسرباز کی جانب سے لوٹے جانے اور تشدد کا شکار بننے والا شہری رپورٹ درج کروانے کے لیے تھانہ ہربنس پورہ اور مغلپورہ کے چکر لگانے پر مجبور ہو گیا،دونوں تھانوں کے اہلکار حدود کا تعین کرنے میں ناکام ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق دھرم پورہ کے رہائشی مٹھو افتخار نے تھانہ ہربنس پورہ کی حدود میں واقع رشید پورہ چوک میں شہباز قریشی نامی شخص سے شادی بینڈز کا کاروبار کیا لیکن8اگست کو شہباز قریشی سے اس کا جھگڑا ہو گیا۔مٹھو افتخار کے مطابق شہباز قریشی نے اسے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر مبینہ طور پر شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور اس کی جیبسے 3ہزار روپے کی رقم نکال لی ۔اس حوالے سے وہ تھانہ ہربنس پورہ درخواست دینے گیا لیکن انہوں نے کہا کہ رشید پورہ ان کی حدود میں نہیں آتا جبکہ باغبانپورہ تھانہ کے پولیس اہلکاروں نے تھانہ ہربنس پورہ میں کی حدود بتائیں۔مٹھو افتخار کے مطابق گزشتہ تین روز سے وہ ہر روز ان دونوں تھانوں کے چکر لگا رہا ہے لیکن پولیس اہلکاروں سے ان کے تھانہ کی حدود کا تعین نہیں ہو پا رہا ہے۔پولیس حکام سے اپیل ہے کہ اس حوالے سے اس کی داد رسی کی جائے۔اس حوالے سے جب تھانہ ہربنس پورہ میں رابطہ کیا گیا تو انہوں نے بتایا کہ رشید پورہ ان کی ہی حدود میں ہے لیکن جب مٹھو افتخار کے کیس کے حوالے سے پوچھا گیا تو انہوں نے واقعہ سے لاعلمی کا اظہار کردیا۔

مزید : علاقائی