دنیا کا انوکھا ترین آپریشن ، ڈاکٹروں نے پسلیوں سے کان بنا لئے

دنیا کا انوکھا ترین آپریشن ، ڈاکٹروں نے پسلیوں سے کان بنا لئے
دنیا کا انوکھا ترین آپریشن ، ڈاکٹروں نے پسلیوں سے کان بنا لئے

  

لندن (نیوزڈیسک) برطانیہ میں بچے کی پسلیوں سے کان بنا دیئے گئے۔ نو سالہ کیرن سورکن پیدائشی طور پر کانوں سے محروم تھا، جس کی لندن کے سب سے بڑے ہسپتال اورمنڈ سٹریٹ میں سرجری کی گئی۔ کیرن جب پیدا ہوا تو اس کے کان کے بجائے مذکورہ جگہ پر صرف لو موجود تھی اور وہ مکمل طور پر بہرہ تھا لیکن بعدازاں ایک سرجری کے ذریعے مصنوعی طریقے سے وہ سننے لگا تھا۔ جس کے بعد اب ڈاکٹرز نے اس کی پسلیوں سے نرم ہڈی لے کر اس سے کان بھی بنادیئے۔ سرجری کے بعد روبصحت ہونے پر کیرن نے بتایا کہ ”میں لوگوں کے سوالوں سے تنگ آ چکا تھا اور چاہتا تھا کہ میں اپنے دوستوں کی طرح نظر آﺅں۔ میں عینک اور ایئرفون لگانا چاہتا ہوں، جو سرجری سے قبل ممکن نہیں تھا“۔ اس ضمن میں کیرن کی والدہ لوئس کا کہنا ہے کہ ”میرا بیٹا ایک ملنسار فرد ہے، جو اس آپریشن کے لئے بے قرار تھا۔ میں نہیں چاہتی کہ میرے بیٹے کے ساتھ غنڈہ گردی کی جائے، اسے ستایا جائے، کیرن کو عام بچوں کی طرح قبول کیا جائے“۔ آپریشن کی صبح سرجن نیل بولسٹروڈ نے کیرن کے کانوں کی نقل تیار کی، جس کے بعد اسی سائز کے کان تیار کئے گئے۔ کان تیار کرنے کے لئے ڈاکٹرز کی ٹیم نے کیرن کی پسلیوں سے نرم ہڈی لی، جسے بعدازاں کانوں کی شکل دے دی گئی۔ واضح رہے کہ برطانیہ بھر میں تقریباً سو فیصد سالانہ ایک یا دونوں کانوں سے محروم پیدا ہوتے ہیں اور لندن کا یہ معروف اورمنڈ سٹریٹ ہسپتال ہرسال اس طرح کے 40 آپریشن کرتا ہے۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ یہ سرجری کاسمیٹکس ہے، اس کے ذریعے کان اگائے نہیں جاتے اور نہ ہی سننے کی صلاحیت بڑھ سکتی ہے۔

مزید : ادب وثقافت