ٹیکسٹ بک بورڈ کی سرکاری اراضی بیچنے پرمعطل ہونے والا پٹواری نیاز بیگ میں تعینات

ٹیکسٹ بک بورڈ کی سرکاری اراضی بیچنے پرمعطل ہونے والا پٹواری نیاز بیگ میں ...

  

لاہور (اپنے نمائندے سے)پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ کی سرکاری اراضی بیچنے ،ریکارڈ میں ردو بدل کر تے ہوئے فرضی مالکان کے ذریعے واسا سے پیسے نکلوانے اور فراڈ، جعلسازی کے سنگین الزامات کے تحت معطل ہونے والے پٹواری کو لینڈ مافیا نے نیاز بیگ میں تعینات کروا دیا ،ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کلکٹر ریونیو کی جانب سے پٹواری کی سابق رپورٹس ،بری شہرت اور کارکردگی کو نظر انداز کردیا گیا ،لینڈ مافیا میں جشن ،نیاز بیگ کے ریکارڈ من مرضی سے ٹمپرنگ کرنے کی منصوبہ بندی شروع کر دی گئی ،مبینہ طور پر ملنے والی معلومات کے مطابق محکمہ ریونیو کی مخصوص لابی اپنی مرضی کے پٹواری تعینات کروانے کیلئے سرگرم ہو گئی اور گزشتہ روز ایک ایسے پٹواری کو نیاز بیگ کا ایڈیشنل چارج دینے کے احکامات جاری کئے ہیں جس پر قبل ازیں پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ کا سرکار ی رقبہ جعلسازی سے فروخت کرنے کے الزام کے تحت مقدمہ نمبر 14/12درج کیا جا چکا ہے اور کرسچین کمیونٹی کی جانب سے اس جعلسازی پر شدید احتجاج کیا گیا ہے چیونکہ وہ رقبہ چرچ کیلئے مخصوص کیا گیا تھا جعلسازی عیاں ہونے پر وزیر اعلیٰ پنجاب کے حکم پر مذکورہ پٹوری کے خلاف کاروائی عمل میں لائی گئی اور محکمہ ریونیو نے مذکورہ پٹواری کو بلیک لسٹ قرار دے کر تحصیل حاضر کردیا تھا پٹواری حلقہ آصف رسول کے خلاف موضع کوٹ لکھپت میں تعیناتی کے دوران واسا کی ایکوائر شدہ اراضی میں ایسے فرضی افراد کو کروڑوں روپے دلائے گئے جس کا ریونیو ریکارڈ میں دور تک کوئی تعلق نہ تھا مذکورہ پٹواری کی کرپشن کی بازگشت پر محکمانہ کاروائی کا سلسلہ بھی جاری ہے ستم بالائے ستم یہ ہے کہ ریکارڈ میں ردو بدل ،ٹمپرنگ ،رشوت وصولی اور اختیارات کے ناجائز استعمال کے تحت مذکورہ پٹواری کے خلاف محکمہ اینٹی کرپشن ،پولیس اور دیگر احتسابی اداروں میں مقدمات اور سنگین انکوائریاں تاحا ل زیر سماعت ہیں تاہم ریکارڈ یافتہ پٹواری کو ایک سوچی سمجھی پلاننگ کے تحت موضع نیاز بیگ میں ایڈیشنل چارج دیا جا رہا ہے جس کے پیچھے لینڈ مافیا کے درینہ مقاصد چھپے ہوئے ہیں اور ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کلکٹر لاہور عرفان نواز میمن کی جانب سے بھی گزشتہ دنوں مذکورہ پٹواری کی بری شہرت اور ناقص کارکردگی کو نظر انداز کرتے ہوئے سازشیوں کو خوش کر دیا گیا ،ریونیو ماہرین کا کہنا ہے کہ محکمہ ریونیو میں ایسے احکامات سے نہ صرف لینڈ مافیا کے حوصلے بلند ہوتے ہیں بلکہ الٹا کرپٹ اہلکاروں کو محکمہ کی جانب سے تحفظ فراہم کئے جانے کا تاثر بھی قائم ہو چکا ہے مذکورہ پٹواری کی تعیناتی کا لیٹر جاری ہونے کے بعد پٹواری حلقہ آصف رسول اور اس کی لابی کی جانب سے ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کلکٹر لاہور کے سٹاف میں ہزاروں روپے بھی تقسیم کئے گئے ،دوسری جانب مذکورہ پٹواری آصف رسول کا کہنا ہے کہ نیاز بیگ میں کام کر نا ایک بڑا چیلنج ہو گا ،الزامات بے بنیاد ہیں سابق اے ڈی سی آر اور دیگر افسران غلط فہمی کی بناء پر میرے خلاف فیصلے کرتے تھے اب کام کرکے دیکھاؤں گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -