پنجاب حکومت کا اعلی سطحی وفدچینی صوبہ جیلن کا دورہ کرے گا

پنجاب حکومت کا اعلی سطحی وفدچینی صوبہ جیلن کا دورہ کرے گا

  

لاہور( خبر نگار ) صوبائی وزیر محنت و انسانی وسائل راجہ اشفا ق سرور نے کہا ہے کہ چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈور منصوبے کے تناظر میں صوبہ پنجاب اور چینی صوبہ جیلن کے درمیان پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت سرمایہ کاری اور اشتراک کار بڑھانے کے لئے پنجاب حکومت کا اعلی سطح کاوفد اسی ماہ صوبہ جیلن کا دورہ کرے گا۔لائیوسٹاک و ڈیری ڈویلپمنٹ ، زراعت ، آٹو انڈسٹری ، بائیو ٹیکنالوجی ، ریسرچ و دیگر شعبوں میں صوبہ جیلن کے تجربات سے استفا دہ اور دوطرفہ تعاون کو فروغ حاصل ہوگا۔ انہوں نے یہ بات وزیراعلی محمد شہباز شریف کی قائم کردہ کمیٹی کے دوسرے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ چیئرمین پنجاب بورڈ آف انوسٹمنٹ اینڈ ٹریڈ عبدالباسط،ڈی جی پی بی آئی ٹی لبنی پٹھان، سپیشل سیکرٹری زراعت گلزار ایچ شاہ ، ممبرپبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ سیل پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ آغا وقار جاوید اور عطااللہ تارڑ سمیت متعلقہ محکموں کے افسران نے اجلاس میں شرکت کی۔ اجلاس کو بتایاگیا کہ حکومت پنجاب صوبہ جیلن کے سرمایہ کاروں کو صوبہ پنجاب کے مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری کے لئے سازگار ماحول ، بہترین مراعات اور فول پروف سیکورٹی فراہم کرے گی ۔ممبرپبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ سیل آغاوقار جاوید نے اجلاس کو بتایا کہ لائیوسٹاک و ڈیری ڈویلپمنٹ سیکٹر میں صوبہ جیلن کی طرف سے سرمایہ کاری کے لئے پنجاب حکومت کے پاس 77ہزار ایکڑ زرخیز زرعی اراضی موجود ہے جہاں لائیوسٹاک و ڈیری فارمنگ کے ذریعے منافع بخش سرمایہ کاری کے وسیع امکانات ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کی طرف سے آٹو پالیسی عنقریب متعارف کروائے جانے کے بعد صوبہ پنجاب میں آٹو انڈسٹری کے شعبے میں صوبہ جیلن کی طرف سے سرمایہ کاروں اور صنعتکاروں کو منافع بخش سرمایہ کاری کے شاندار مواقع میسر آئیں گے۔ وزیر محنت راجہ اشفاق سرور نے کہا ہے کہ زرعی اجناس ، دالوں ، پھلوں اور سویابین آئل کی بہترین پیداوار کے حصول کے لئے صوبہ جیلن کی بائیوٹیکنالوجی میں جدید ریسرچ اور تجربات سے بھی بھرپور استفادہ کیا جائے گا جبکہ چین کی فروٹ مارکیٹ میں پاکستانی آموں کی ایکسپورٹ بڑھانے کے لئے بھی ٹھوس اقدامات عمل میں لائے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ صوبہ جیلن کی ایگریکلچرل و زرعی یونیورسٹی میں پنجاب کے طلبا و طالبات کو پنجاب ایجوکیشن انڈوومنٹ فنڈ کے تحت وظائف کے ذریعے ریسرچ و تربیت کے لئے بھجوایا جائے گا جبکہ میزMAIZEاور ملٹ MILLETریسرچ انسٹی ٹیوٹ یوسف والہ اور میز ریسرچ انسٹی ٹیوٹ آف چائنہ و نارتھ ایشیا ایگریکلچرل ریسرچ اینڈ ٹریننگ سینٹر جیلن کے درمیان جدیدریسرچ پر مبنی تعاون کو فروغ دینے لئے بھرپور اقدامات کئے جائیں گے۔

مزید :

کامرس -