الطاف حسین کی جانب سے مارنے کی دھمکیاں ،نبیل گبول سیکیورٹی کیلئے عدالت پہنچ گئے

الطاف حسین کی جانب سے مارنے کی دھمکیاں ،نبیل گبول سیکیورٹی کیلئے عدالت پہنچ ...

  

کراچی(آن لائن ،اے این این) متحدہ کے سابق ایم این اے بنیل گبول الطاف حسین کی دھمکیوں کا معاملہ لے کر عدالت پہنچ گئے،پولیس پر عدم اطمینان رینجرز کی سکیورٹی فراہم کرنے کی استدعا،درخواست میں وفاق اور سندھ حکومت کو بھی فریق بنایا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق منگل کو ایم کیوا یم کے سابق ایم این اے نبیل گبول نے سندھ ہائی کورٹ میں ایک درخواست دائر کی ہے جس میں موقف اختیار کیا ہے کہ انھوں نے ایم کیو ایم چھوڑنے کے بع دکئی انکشاف کئے ہیں اور حقائق بیان کرنے کی وجہ سے الطاف حسین کی جانب سے قتل کی دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔الطاف حسین مجھ سے شدید ناراض ہیں اور ایسے حالات میں سندھ حکومت نے مجھ سے سکیورٹی بھی واپس لے لی ہے،مجھے جان کا خطرہ ہے اگر میرے ساتھ کچھ ہوا تو ذمہ دار سندھ حکومت ہو گی۔انھوں نے درخواست میں سکیورٹی فراہمی کی استدعا کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ مجھے پولیس پر بھروسہ نہیں ہے لہذا رینجرز کی سکیورٹی فراہم کی جائے۔نبیل گوبل نے درخواست میں وفاق اور سندھ حکومت کو بھی فریق بنایا ہے۔دوسری جانب سندھ اسمبلی میں ایم کیوایم کے رہنما اورقائد حزب اختلاف خواجہ اظہارالحسن نے کہا ہے کہ کراچی میں امن و امان کی صورتحال بتدریج بہترہورہی ہے لیکن نبیل گبول نے ابھی عدالت میں درخواست داخل کی ہے،اخبارات اورمیڈیا میں رہنے کے لیے لوگ ایسی حرکتیں کرتے رہتے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -