شیخ زید ہسپتال میں نئی تقرریاں ،چیئرمین کی تعیناتی کے عدالتی فیصلے سے مشروط

شیخ زید ہسپتال میں نئی تقرریاں ،چیئرمین کی تعیناتی کے عدالتی فیصلے سے مشروط
شیخ زید ہسپتال میں نئی تقرریاں ،چیئرمین کی تعیناتی کے عدالتی فیصلے سے مشروط

  

لاہور (نامہ نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے شیخ زید ہسپتال میں نئی بھرتیوں کو چیئرمین فرید احمد خان کی تعیناتی کے خلاف درخواست کے فیصلے سے مشروط کرتے ہوئے درخواست کی سماعت 7ستمبر تک ملتوی کر دی، مسٹر مامون رشید شیخ نے یہ حکم ناصر دین سمیت متعدد افراد کی طرف سے دائرمتفرق درخواست پر جاری کیا۔درخواست گزار کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ شیخ زید ہسپتال کے بورڈ آف گورنرز کی عدم موجودگی کے باوجود وزیر اعلیٰ پنجاب نے اپنے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے فرید احمد خان کو شیخ زید ہسپتال کے چیئرمین کے عہدے پر تعینات کر رکھا ہے جبکہ سنیارٹی کے مطابق ڈاکٹر فرید 169 ویں نمبر پر ہیں، سپریم کورٹ کے فیصلے میں شیخ زید ہسپتال کی خود مختاری کو برقرار رکھنے کا حکم دیا گیا ہے اس کے باوجود وزیر اعلی پنجاب نے اپنے اختیارات کا غلط استعمال کرتے ہوئے ڈاکٹر فرید احمد خان کو شیخ زید ہسپتال کے چیئرمین کو تعینات کیاہے اور اب چیئرمین فرید احمد خان کی جانب سے ہسپتال میں پیرا میڈیکل سٹاف اور نرسز سمیت دیگر شعبوں میں بھرتیوں کا عمل شروع کیا گیا ہے،ڈاکٹر فرید احمد خان کی بطور چیئرمین شیخ زید ہسپتال کی تعیناتی کے خلاف درخواست کے حتمی فیصلے تک بھرتیوں کا عمل روکنے کا حکم دیا جائے، ابتدائی سماعت کے بعد عدالت نے شیخ زید ہسپتال میں نئی بھرتیوں کو چیئرمین فرید احمد خان کی تعیناتی کے خلاف درخواست کے فیصلے سے مشروط کرتے ہوئے درخواست کی سماعت 7ستمبر تک ملتوی کر دی۔

مزید :

لاہور -