جمہوری نظام ڈی ریل ہوا تو اس کے ذمہ دار نواز شیرف ہونگے: لیاقت بلوچ

جمہوری نظام ڈی ریل ہوا تو اس کے ذمہ دار نواز شیرف ہونگے: لیاقت بلوچ

ملتان (سٹی رپورٹر)جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی سیکر ٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ جمہوری سیٹ اپ ڈی ریل ہوا یا ملٹری اسٹیبلشمنٹ نے شب خون مارا تو اس کے تمام تر ذمہ دار نا اہل وزیر اعظم نوازشریف اور اس کی پارٹی ہوگی۔ آئین وقانون کی حکمرانی اور نظریہ پاکستان میں ہی ہماری بقاء اور ترقی کا راز مضمر ہے آئین کی دفعہ 62،63 کو آئین سے نکالنے کی کوشش کی گئی تو بھر پورمزاحمت کی جائے گی ۔ دینی قوتوں کو متحد کرکے سیکولر قوتوں(بقیہ نمبر13صفحہ12پر )

کا راستہ روکا جائے گا۔ پاکستان اسلام کے نام پر بنا اسی پر قائم رہ سکتا ہے۔ ان خیا لات کا اظہار انہوں نے ’’دارالسلام ‘‘میں جماعت اسلامی ملتان کے زیر اہتمام سیمینار بعنوان نظریہ پاکستان اور آج کا پاکستان سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیمینار سے میاں آصف محمود اخوانی ، عظیم الحق پیرزادہ،صہیب عمار صدیقی، چودھری ظفر اقبال آرائیں ،چودھری اطہر عزیز ایڈووکیٹ ، ڈاکٹر صفدر اقبال ہاشمی ، ڈاکٹر خالد رشید نے خطاب کیا جبکہ خواجہ جمال الدین اصغر ، چودھری فیاض اسلم، کنور محمد صدیق، حافظ عبدالرحمن حیدری بھی اسٹیج پر موجود تھے انہوں نے کہا کہ احتساب صرف نواز شریف خاندان پر ہی ختم نہیں ہونا چاہئے بلکہ تمام کرپٹ لوگوں کا ہونا چاہئے انہوں نے کہا کہ نوازشریف ناکام وزیر اعظم تھے نہ وہ کبھی پارلیمنٹ میں آئے تھے نہ ہی کابینہ کے اجلاسوں میں فیصلے ہوتے تھے نہ ہی وزیر خارجہ تھا نہ ہی اُن کی کوئی خارجہ پالیسی تھی کشمیر پر انتہائی کمزور موقف رکھتے تھے ۔ نریندر مودی پاکستان میں دہشت گردی کی سرپرستی کررہے تھے میاں صاحب مودی سے ذاتی دوستی اور کاروبار کررہے تھے بھارتی دہشت گرد کلبھوشن پکڑا گیا مگر میاں نوازشریف نے بھارت کے مکروہ چہرے کو دنیا کے سامنے بے نقاب کرنے کی بجائے خاموش رہے انہوں نے کہا کہ جب تک ہماری گردنوں پر سر موجود ہے نظریہ پاکستان اور دستور پاکستان کیحفاظت کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کا مستقبل اسلام سے وابستہ ہے اسلام کے علاوہ کوئی چیز پاکستان کو متحد نہیں رکھ سکتی ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...