گھر پر دستی بم سے حملہ کرنیوالا انسداد دہشتگردی عدالت کے حوالے

گھر پر دستی بم سے حملہ کرنیوالا انسداد دہشتگردی عدالت کے حوالے

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورکی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے گھرپر دستی بموں سے حملہ کرنے کے الزام میں گرفتار ملزم کو دس روزہ جسمانی ریمانڈپر محکمہ انسداد دہشت گردی کے حوالے کردیا استغاثہ کے مطابق ملزم محمد آیاز ساکن شیریکیرہ پشاور پرالزام ہے کہ وہ مدعی تاج محمد ساکن حاجیانو کلی پشاور کے گھر پر دو بار دستی بموں سے حملہ کرنے میں ملوث ہے مدعی تاج محمد نے 23جولائی 2016کو ایف آئی آر درج کراتے ہوئے پولیس کو بتایا تھا کہ اس کے گھر پردو بار دستی بم سے حملہ کیا گیا ہے جس میں مدعی تاج محمد اور اس کے دو پوتے زخمی ہو گئے ہیں جس کے بعد ملزم ابھی تک روپوش تھا جس کو گزشتہ روز گرفتار کرکے پولیس نے ان کے خلاف دفعہ 324کے تحت اقدام قتل اور دہشت گردی کے دفعات 7اے ٹی اے اور 5ایکسپلو سیو کے تحت مقدمہ درج کیا ہے ملزم کو گرفتار ی کے بعد گزشتہ روز انسداد دہشت گردی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں پر فاضل عدالت نے اسے 10دن کی جسمانی ریمانڈ پر سی ٹی ڈی کے تحویل میں دے دیا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...