نواز شریف کی لاہور واپسی ، ریلی پہلوانوں کے شہر سے نکل کرداتا کی نگری کیلئے روانہ، سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات

نواز شریف کی لاہور واپسی ، ریلی پہلوانوں کے شہر سے نکل کرداتا کی نگری کیلئے ...
نواز شریف کی لاہور واپسی ، ریلی پہلوانوں کے شہر سے نکل کرداتا کی نگری کیلئے روانہ، سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات

  


گوجرانوالہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق وزیراعظم نوازشریف کی ریلی کامونکی سے لاہور کی طرف روانہ ہو چکی ہے، چوتھے روز گوجرانوالہ سے شروع ہونیوالی ریلی کامونکے اور مریدکے سے ہوتی ہوئی شاہدرہ کے راستے لاہور میں داخل ہوگی اور داتا دربار پہنچ کر اختتام پذیر ہوگی جہاں سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نوازشریف کی قیادت میں اسلام آباد سے چلنے والی ریلی کا آج چوتھا اورآخری روز ہے اور اب ان کا قافلہ اپنی آخری منزل لاہور کی جانب گامزن ہے۔ گوجرانوالہ میں ایک رات قیام کے بعد نوازشریف کی ریلی براستہ کامونکے اور مریدکے لاہور پہنچے گی جہاں سابق وزیراعظم پہلے شاہدرہ چوک اور پھر داتا دربار کے باہر ریلی کے شرکا سے خطاب کریں گے۔ ریلی کے پہلے روز نواز شریف کی ریلی کی رفتار بہت سست رہی جبکہ دوسرے روز یہی ریلی 120 کی رفتار سے جہلم پہنچی جبکہ تیسرے روز لیگی ریلی کی رفتار پھر سست ہوگئی۔ آج یہ ریلی 75 کلومیٹر کے قریب فاصلہ طے کرے گی اور س میں کتنا وقت لگے گا اس کے بارے میں کوئی حتمی رائے نہیں دی جا سکتی۔

”سپریم کورٹ کی جانب سے نا اہلی کے معاملے کو عالمی عدالت میں لے جاﺅ ں تو ۔۔۔“ گوجرانوالہ سے لاہور روانگی سے قبل مشاورتی اجلاس میں نواز شریف نے اب تک کی سب سے حیران کن بات کہہ دی

نواز شریف کی ریلی گوجرانوالہ کے چن دا قلعہ سے لاہورکیلئے روانہ ہو چکی ہے۔ ریلی کی آمد کے پیش نظر لاہور میں سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں، شہر کے تمام داخلی راستے سیکیورٹی خدشات کے باعث بند کردیئے گئے ہیں۔ شاہدرہ، داتا دربار اور کچہری چوک کی قریبی سڑکیں عام ٹریفک کیلئے بند کردی گئی ہیں اور ان کیلئے متبادل روٹ دے دیے گئے ہیں جبکہ میٹرو بس سروس کو ایم اے او کالج تک محدود کردیا گیا ہے۔

نواز شریف آئین کی سربلندی کیلئے جدو جہد کر رہے ہیں،عوام کے ووٹ کے تقدس کی توہین پر یوم حساب کب ہو گا: خواجہ آصف کا 20 کروڑ کا سوال

وفاقی وزیرخارجہ خواجہ آصف کی قیادت میں سیالکوٹ سے جانے والا قافلہ اور وفاقی وزیرقانون زاہد حامد کی قیادت میں پسرور سے روانہ ہونے والی ریلی کامونکی میں نوازشریف کا استقبال کرے گی ۔ یہ دونوں جلوس نواز شریف کی مرکزی ریلی میں شریک ہوں گے اور ان کے ساتھ لاہور تک جائیں گے۔ مریدکے میں وزیرداخلہ احسن اقبال اور وزیردفاعی پیداوار رانا تنویر نوازشریف کا استقبال کریں گے، شہر کی مرکزی شاہراہ پر اسٹیج تیار کیا گیا ہے اور نوازشریف کا شرکا سے خطاب بھی متوقع ہے ، لاہور سے مریدکے میں داخلے کی مرکزی شاہراہ بند کردی گئی ہے اور مسافروں کو آبادیوں سے گزرنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔نواز شریف کے خطاب کیلئے شاہدرہ اور داتا دربار پر بھی سٹیج تیار کیے گئے ہیں جہاں ان کاکارکنوں سے خطاب متوقع ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...