پی سی بی نے انگلینڈ میں کاﺅنٹی اور ویسٹ انڈیز میں جاری کربیئن لیگ میں شامل پاکستانی کھلاڑیوں کو ملک واپس لونٹے کا حکم جاری کر دیا

پی سی بی نے انگلینڈ میں کاﺅنٹی اور ویسٹ انڈیز میں جاری کربیئن لیگ میں شامل ...
پی سی بی نے انگلینڈ میں کاﺅنٹی اور ویسٹ انڈیز میں جاری کربیئن لیگ میں شامل پاکستانی کھلاڑیوں کو ملک واپس لونٹے کا حکم جاری کر دیا

  


لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان کرکٹ بورڈ نے نو ابجیکشن سرٹیفکیٹس کو منسوخ کرتے ہوئے انگلینڈ اور ویسٹ انڈیز میں موجود 13پاکستانی کھلاڑیوں کو واپس بلا لیاہے اور انہیں اپنی قومی اور ڈومیسٹک ذمہ داریاں پوری کرنے کی ہدایات جار ی کر دیں ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے 10کھلاڑیوں کو کریبین پریمئر لیگ کھیلنے کی اجازت دی گئی تھی جن میں 7وہ کھلاڑی بھی شامل ہیں جنہیں سینٹرل کنٹریکٹ دیا گیاہے ،کریبین پریمئر لیگ 4اگست سے شروع ہو گئی جو کہ 9ستمبر تک جاری رہے گی ۔جبکہ ان میں تین کھلاڑی ہو بھی شامل ہیں جنہیں سینٹرل کنٹریکٹ نہیں دیا گیا جن کے نام کامران اکمل ،سہیل تنویر اور محمد سمیع ہیں ۔نیشنل ٹی ٹوینٹی کپ کیلئے انہیں راولپنڈی ،فیصل آباد اور لاہور وائٹس میں شامل کیا گیاہے جس کے باعث ان تمام کھلاڑیوں کو پاکستان واپس پہنچنے کی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں ۔

محمد عامر اس وقت لندن میں ایسکس کاونٹی کھیل رہے ہیں اور انہوں نے وہاں پر بھی اپنا لوہا منوایا تاہم اب انہیں بھی واپس بلانے کیلئے نوٹس جاری کر دیا گیاہے جبکہ نٹ ویسٹ ٹی ٹوینٹی بلاسٹ میں یارک شائر کی جانب سے کھیل رہے قومی ٹیم کے کپتان سرفراز اور فخر زمان کو بھی وطن واپس لوٹنے کا حکم جاری کردیا گیاہے ۔

سینٹرل کنٹریکٹ میں شامل کھلاڑیوں کو اس شرط پر کریبین لیگ اور کاﺅنٹی کھیلنے کی اجازت دی گئی تھی کہ اگر ورلڈ الیون کی سیریز کے معاملات طے پا جاتے ہیں تو انہیں واپس بلا لیا جائے گا ۔تاہم ورلڈ الیون کی جانب سے دورے میں تاخیر ہو گئی ہے ،یہ تاخیر این اے 120میں ہونے والے ضمنی الیکشن کے باعث کی گئی ہے تاکہ اس کی وجہ سے سیریز متاثر نہ ہو ۔

مزید : کھیل


loading...