ڈاکٹر حافظ عبدالکریم کی قیادت میں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے کارکنان کا راوی روڈ میں نواز شریف کا پر تپاک استقبال

ڈاکٹر حافظ عبدالکریم کی قیادت میں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے کارکنان کا راوی ...
ڈاکٹر حافظ عبدالکریم کی قیادت میں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے کارکنان کا راوی روڈ میں نواز شریف کا پر تپاک استقبال

  


لاہور ( ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف ’’مشن جی ٹی روڈ کے آخری روز اسلام آباد سے شاہدرہ پہنچ چکے ہیں اور ہزاروں افراد کے قافلے کے ساتھ اپنی اختتامی تقریب میں خطاب کے لئے انتہائی سست روی کے ساتھ داتا دربار کی جانب  رواں دواں ہیں ،نواز شریف کا اگلا پڑاؤ بتی چوک راوی روڈ میں ہوا جہاں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے استقبالی  کیمپ  میں ہزاروں افراد نے اپنے قائد کا پر تپاک استقبال کیا  ،اس کیمپ میں وفاقی وزیر مواصلات اور مرکزی جمعیت اہل حدیث کےسیکر ٹری جنرل ڈاکٹر حافظ عبد الکریم کی قیادت میں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے رہنما اور کارکنان بڑی تعداد میں موجود ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے کارکنان ناظم اعلی وفاقی وزیر مواصلات ڈاکٹر حافظ عبدالکریم کی قیادت میں مرکزاہل حدیث راوی روڈ کے باہر نوازشریف کے قافلے کا استقبال کرنے کے لئے موجود ہیں  جہاں انہوں نے میاں نواز شریف ،سینیٹر پروفیسر ساجد میر اور حافظ عبدالکریم  کی تصاویر والے پلے کارڈز  اٹھا رکھے ہیں جن پر سابق وزیر اعظم کی حمایت میں نعرے درج ہیں جبکہ استقبالی سٹیج سے کارکنوں کا لہو گرمانے کے لیے انقلابی ترانے چل رہے ہیں۔

استقبالی کیمپ میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر مواصلات ڈاکٹر حافظ عبدالکریم نے کہا کہ نوازشریف کی عوامی مقبولیت سے مخالفین کی نیندیں حرام ہو گئی ہیں ،  عوا م کی عدالت نے اپنا فیصلہ سنا دیا ہے کہ ملک کے لیے نواز شریف ناگزیر ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملکی استحکام اور ترقی کے لیے نواز شریف کی پالیسیوں کا تسلسل ضروری ہے،  لوڈشیڈنگ سے نجات کے منصوبے اور سی پیک کا عظیم الشان منصوبہ ملک دشمنوں کو ہضم نہیں ہورہا، یہ سازش نواز شریف کے خلاف نہیں ملکی ترقی اور جمہوریت کی بالادستی کے خلاف ہے،ہم نے متحد ہو کر ہی ان سازشوں کا مقابلہ کرسکتے ہیں ، بدقسمتی سے یہاں نظریہ ضرورت کے تحت آئین توڑنے والوں کو تحفظ دیاجاتا ہے اور سیاست دان ان سازشوں کا دم چھلا بن جاتے ہیں ۔ حافظ عبدالکریم نے مزید کہا کہ جمہوریت کی عملداری آئین و قانون کی حقیقی حکمرانی قائم ہو جائے تو ملک سنور سکتا ہے ، یہاں بعض لوگ اور ادارے اپنے آپ کو مقدس گائے سمجھتے ہیں اور قانون کی پکڑسے اپنے آپ کو ماورا سمجھتے ہیں ۔اس موقع پر سینئر نائب ناظم اعلی مولانا محمد نعیم بٹ،سابق ایم پی اے حاجی عبدالرزاق ،حاجی نذیر احمد انصاری ،حافظ عبدالحمید جہلمی،میاں محمود عباس ،مولانا محمد سالم، ملک محمد سلیمان، حافظ عبدالغفار،قاری عبدالمتین اصغر، رانا نصراللہ خاں ،امتیاز احمد مجاہد، حافظ مسعود اظہر، ڈاکٹر طارق عباس ،حافظ عبدالسمیع اوکاڑوی ودیگر موجود تھے ۔

مزید : لاہور


loading...