موسم کی تبدیلی کیلئے زیادہ سے زیادہ پودے لگائے جائیں: وی سی عظمیٰ قریشی

   موسم کی تبدیلی کیلئے زیادہ سے زیادہ پودے لگائے جائیں: وی سی عظمیٰ قریشی

  

ملتان(سٹاف رپورٹر)خواتین یونیورسٹی ملتان کی وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عظمیٰ قریشی نے کہا کہ ہمیں موسم کی تبدیلی کے لیے زیادہ سے زیادہ پودے لگانے چاہئیں اور ان کا باقاعدگی سے خیال بھی رکھنا چاہیے‘ درخت ماحول کو خوشگوار بنانے کے ساتھ ساتھ آکسیجن حاصل (بقیہ نمبر42صفحہ7پر)

کرنے کا بھی بہترین ذریعہ ہیں۔ ویمن یونیورسٹی میں زیادہ سے زیادہ پودے لگائیں تاکہ ماحول کو آلودگی سے پاک کیا جا سکے جس جگہ جتنے زیادہ درخت ہوں گئے وہاں کا ماحول اتناہی زیادہ خوشگوار ہوگا۔وہ متی تل کیمپس میں شجر کاری مہم کے افتتاح کے موقع پر گفتگو کررہی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ جشن آزادی کے اس مہینے میں پاکستان کا ہر شہری اپنے گھروں میں سبز ہلالی پرچم لہرانے کے ساتھ اپنے حصے کا ایک پودابھی ضرور لگائیں کیوں کہ تیزی سے بڑھتی ہوئی آبادی کی وجہ سے باغات کو ختم کرکے رہائشی علاقے بننے کی وجہ سے دنیا میں درجہ حرارت کا توازن بگڑ گیا ہے اور موسمی تغیرات تیزی سے بدل رہے ہیں اور گرمائش کی زیاتی ہورہی ہے جس کا علاج صرف اور صرف درخت لگانا ہے تاکہ سر سبز باغات دوبارہ سے وجود میں آسکیں اور آنے والی نسل کو ہم بہترین صحت مندانہ ماحول فراہم کرسکیں.اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر حنا علی نے شجرکاری کی اہمیت اور افادیت پر روشنی ڈالی۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر مریم زین نے کہا کہ اس کار خیر میں اپنا کردار ادا کریں تاکہ فضا آلودگی سے پاک ہو۔  انہوں نے کہا کہ درخت لگانا ہماری مذہبی اور قومی ذمہ داری ہے۔اس موقع پر ڈاکٹر عظمیٰ قریشی نے پودا لگایا اور شجرکاری مہم کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر اسد بھٹہ (پروجیکٹ ڈائریکٹر) اور(انجنیئر)عدنان بھی موجود تھے۔

خطاب

مزید :

ملتان صفحہ آخر -