آزاد کشمیر میں 31سال بعد بلدیاتی انتخابات ،28ستمبر کو 30لاکھ ووٹرز حق رائے دہی استعمال کریں گے 

آزاد کشمیر میں 31سال بعد بلدیاتی انتخابات ،28ستمبر کو 30لاکھ ووٹرز حق رائے دہی ...
آزاد کشمیر میں 31سال بعد بلدیاتی انتخابات ،28ستمبر کو 30لاکھ ووٹرز حق رائے دہی استعمال کریں گے 

  

مظفر آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )31سال بعد آزاد کشمیر میں بلدیاتی انتخاب 28ستمبر کو ہونگے، جس میں 30لاکھ ووٹرز حق رائے دہی استعمال کریں گے ،الیکشن کمیشن نے شیڈول جاری کر دیا ہے۔

مقامی اخبار "دنیا نیوز" کے مطابق چیف الیکشن کمشنرجسٹس(ر) عبدالرشید سلہریا نے سینئر ممبر الیکشن کمیشن راجہ محمد فاروق نیاز، فرحت علی میر ، سیکریٹری الیکشن کمیشن سردار غضنفر خان کے ہمراہ پریس کانفرنس میں بلدیاتی انتخابات کا شیڈول جاری کیا ، شیڈول کے مطابق کاغذات نامزدگی 15سے 22اگست کو جمع ہوں گے، کاغذات نامزدگی واپس لینے کی تاریخ 23اگست جبکہ حتمی فہرست اسی روز شام کو جاری کر دی جائے گی۔

رپورٹ کے مطابق 25اگست تک کاغذات نامزدگی مسترد ہونے یا کسی بھی امیدوار سے متعلق اپیل کی جائے گی، 26اور 27اگست کو سماعت ہو گی اور 29اگست کو کسی امیدوار کے مقابلے میں دستبردار ہونے والے امیدوار ان اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے سکیں ، 30اگست کو تمام امیدواروں کو انتخابی نشانات الاٹ کردیئے جائیں گے، جبکہ انتخابی نشانا ت کے ہمراہ امیدواروں کی حتمی فہرست 30اگست کو جاری کر دی جائے گی اور 28ستمبر کو صبح 8بجے سے شام 5بجے تک بلا تعطل پولنگ ہو گی،

 ممبر الیکشن کمیشن نے بتایا کہ آزاد کشمیر میں حکومت سے مشاورت کے بعد بلدیاتی انتخابات جماعتی بنیادوں پر کروائے جا رہے ہیں اور اس وقت آزاد کشمیر الیکشن کمیشن کے پاس 33سیاسی جماعتیں رجسٹرڈ ہیں ا سکے علاوہ آزاد امیدوار بھی الیکشن میں حصہ لے سکتے ہیں، میٹر ک کی شرط کے حوالے سے الیکشن کمیشن نے بتایا کہ یہ ایکٹ کا حصہ ہے جس میں تبدیلی ممکن نہیں.

مزید :

قومی -علاقائی -آزاد کشمیر -