نظام اورنصاب کی پالیسیوں نے نسل نو کا بیڑہ غرق کر دیا،اللہ رکھا گجر

نظام اورنصاب کی پالیسیوں نے نسل نو کا بیڑہ غرق کر دیا،اللہ رکھا گجر

لاہور(خبرنگار) نظام اورنصاب رائج کرناجیسی پالیسیوں نے پنجاب کی نسل نو کا بیڑہ غرق کر کے رکھ دیا ہے۔کونسل پنجاب ٹیچرز یونین پنجاب کے مرکزی صدر اللہ رکھا گجر،سیکریٹری جنرل چوھدری تاج حیدر، رائے غلام مُصطفٰی ریاض،مرزا طارق،ارشد گل،رائے عبداللہ ،معیزسندھو،بشیر خاں،رانا نقیب سمیت دیگر راہنماؤں نے حکومت پنجاب کی طرف سے سکولز ایجوکیشن کے لیئے بنائی گئی تعلیمی پالیسیوں پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مار نہیں پیار،انگلش میڈیم ذریعہ تعلیم، محکمہ کے رولز پر عمل نہ کرنے والوں کو سزا،سکول سے خارجہ ،والدین کو احساس دلوانے کے لیئے جُرمانہ وغیرہ کا خاتمہ ،بے کار اور فضول آن لائن شکایات،آرمی مانیٹرنگ سیل کا قیام،بے اختیار ٹیچرز اور ہیڈ ٹیچرز کو بلا وجہ جُرمانے ، سزائیں اور میڈیا کے ذریعے کردار کُشی، نظریہ اسلام کے نام پر بننے والے مُلک میں قرضہ کی شرط پر اسلامی نظام ونصاب تعلیم کا آہستہ آہستہ خاتمہ کر کے یہودوہنود کا دیا ہوا نظام اورنصاب رائج کرناجیسی پالیسیوں نے پنجاب کی نسل نو کا بیڑہ غرق کر کے رکھ دیا ہے۔

پنجاب کے تعلیمی اداروں سے تعلیم مکمل کرنے والے طلباء کا دُنیا میں ایک اعلٰی مقام ہوا کرتا تھا مگر آج کے طلباء حکومتی غلط تعلیمی پالیسیوں کی وجہ سے ایک طرف اخلاق،ادب،ہُنر،محنت،لگن،مُلک و قوم کی محبت سے عاری اور دوسری طرف ڈگریوں کے ہاتھ میں ہونے کے باوجود روزگار نہ ملنے پرہاتھ سے کوئی بھی کام کرکے روزی کمانے کے قابل نہیں ہو رہے ہیں۔ راہنماؤں نے بر سر اقتدار قوتوں سے پُر زور مطالبہ کیا ہے کہ قرض کے لالچ میں آ کر یہودوہنود کی طرف سے ٹھونسے جانے والے تعلیمی نظام ونصاب کی بجائے اسلامی نصاب ونظام تعلیم رائج کر کے پنجاب کی نسل نو کو بچا لیا جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4