دیامیربھاشااورمہمندڈیم فنڈزسے متعلق کیس،ڈیم فنڈکی سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع

دیامیربھاشااورمہمندڈیم فنڈزسے متعلق کیس،ڈیم فنڈکی سرمایہ کاری سے متعلق ...
دیامیربھاشااورمہمندڈیم فنڈزسے متعلق کیس،ڈیم فنڈکی سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ میں دیامیربھاشااورمہمندڈیم فنڈزسے متعلق کیس میں ڈیم فنڈکی سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ جمع کرادی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں دیامیربھاشااورمہمندڈیم فنڈزسے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،سپریم کورٹ میں ڈیم فنڈکی سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ جمع کرادی گئی،نیشنل بینک کی جانب سے رپورٹ وجاہت قریشی نے جمع کرائی ،رپورٹ کے مطابق اب تک 12 ارب98 لاکھ روپے حاصل ہوچکے،رپورٹ میں کہاگیاہے کہ 11ارب53 کروڑروپے کی سرمایہ کاری ہوئی۔

نمائندہ نیشنل بینک نے کہا کہ 12ارب روپے کی سرمایہ کاری کی ہے،جسٹس اعجازالاحسن نے کہا کہ زبردست سرمایہ کاری کی رقم 11ارب روپے ہے،جسٹس گلزاراحمد نے کہا کہ آپ نے 12ارب روپے کی دوبارہ سرمایہ کاری کی،نمائندہ نیشنل بینک نے کہا کہ جی!جومنافع آتا ہے پھر اسے سرمایہ کاری میں شامل کردیاجاتا ہے،حکام نیشنل بینک نے کہا کہ بینک کے مطابق 21 نومبر کودوبارہ سرمایہ کاری کی گئی، 21 نومبر کودوبارہ سرمایہ کاری کی گئی ۔جسٹس گلزاراحمد نے استفسار کیا کہ یہ جو دوبارہ سرمایہ کاری کی ہے اس کا منافع کب آئے گا؟نمائندہ نیشنل بینک نے کہاکہ 27فروری2020تک اس کامنافع آجائے گا۔

جسٹس اعجاز الاحسن نے کہا کہ ہمیں 2 شکایات موصول ہوئیں،نجی بینک ڈیم فنڈزوصول کرنے سے انکاری ہیں،سٹیٹ بینک کے نمائندے کہاں ہیں؟سٹیٹ بینک کے ڈائریکٹرلیگل عدالت میں پیش ہوئے،جسٹس گلزاراحمد نے کہا کہ نجی بینک کوکس نے کہاڈیم فنڈزوصول نہ کرے،سپریم کورٹ نے فنڈزسے متعلق کوئی احکامات نہیں دیئے،عدالت نے نہیں کہا کہ فنڈزوصول نہ کرے،نمائندہ سٹیٹ بینک نے کہا کہ میں چیک کروں گا۔

عدالت نے سٹیٹ بینک تمام شکایتیں اوررکاوٹوں کو دور کرے ،عدالت نے دیامر بھاشااور مہمند ڈیم فنڈ سے متعلق کیس کی سماعت 4 ہفتے تک ملتوی کردی۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد