پولیو کی تشویشناک صورت حال کا مقابلہ، پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ کا جامع پلان تیار

پولیو کی تشویشناک صورت حال کا مقابلہ، پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ...
پولیو کی تشویشناک صورت حال کا مقابلہ، پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ کا جامع پلان تیار

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ کیپٹن (ر) محمد عثمان کی ہدایت پرپولیو کی تشویشناک صورت حال کا مقابلہ کرنے کیلئے اہم اقدامات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کےمطابق پرائمری اینڈسکینڈری ہیلتھ کئیرڈیپارٹمنٹ نےپولیوجیسےمرض پر قابو پانےکیلئےجامع پلان تیارکر لیاہے،پنجاب آنےوالےتمام راستوں پرقطرے پلانےوالی خصوصی ٹیمیں تعینات کرنے کافیصلہ کیاگیاہے،پنجاب کےتمام داخلی راستوں پرکیمرےلگا کربچوں کی آمداورقطرے پلانے کی مانیٹرنگ ہوں گی،سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ کے مطابق ریلوے سٹیشنز پر 10 اضافی مانیٹرنگ پوائنٹس قائم کیے جائیں گے،قطرے پلانے سے انکار کرنے والوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔کیپٹن(ر)محمدعثمان کاکہناتھاکہ پنجاب بھر سےسیوریج پانی کے196نمونوں میں سے83میں وائرس پایا گیا،جن علاقوں کے سیوریج پانی میں پولیو وائرس پایا گیا،ان علاقوں کو ریڈ زون میں شامل کیا گیا ہے،ریڈ زون میں شامل علاقوں میں ہربچےکویقینی طور پرقطرے پلانے کےلیے اضافی ٹیمیں تشکیل دی جائیں گی۔

سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کئیر ڈیپارٹمنٹ کا مزید کہنا تھا کہ سال 2019 میں پنجاب میں پولیو کے پانچ کیسسز سامنے آئے ہیں،ایک کیس رواں سال جنوری،2 اپریل اور2 جون میں رپورٹ ہوئے ہیں،لاہور سے چار بچے متاثر ہوئے جبکہ ایک کیس جہلم سے رپورٹ ہوا ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ قوم کا مستقبل اپاہج ہورہا ہے، محکمہ کے لوگوں کو آرام خود پر حرام کرنا ہو گا،قوم کے مستقبل کو محفوظ کرنے کے لیے اپنی نگرانی میں منصوبہ بندی مکمل کروائی ہے اوراب عمل کروا کربھی دکھاوں گا،پولیو مہم میں روڑے اٹکانے والے قوم کے بدترین دشمن ہیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور