5اضلاع میں ،پولیومہم، کل سے شروع ،18لاکھ بچے ’’پی کے ‘‘بن جائینگے

5اضلاع میں ،پولیومہم، کل سے شروع ،18لاکھ بچے ’’پی کے ‘‘بن جائینگے

  

لاہور( جنرل رپورٹر)پنجاب کے پانچ اضلا ع میں محکمہ پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر کی ٹیمیں پانچ سال سے کم عمر کے اٹھارہ لاکھ سے زائد بچوں کو پیر کے روز سے شروع ہونے والی تین روزہ مہم میں پولیو کے قطرے پلائیں گی ۔ماحولیاتی نمونوں میں پولیو وائرس کی موجودگی کی وجہ سے ان اضلاع میں مہم کا آغاز کیا جا رہا ہے ۔ضلع ملتان میں موجودہ مہم اٹھارہ فروری تک جاری رہے گی۔ پنجاب کے وزیر برائے پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر خواجہ عمران نذیر نے گزشتہ روز تمام اضلاع کو تیاری مکمل کرنے کے احکامات جاری کیے ۔ ان اضلاع میں ملتان، لودھرا ں ،مظفر گڑھ ،خانیوال اور ٹوبہ ٹیک سنگھ شامل ہیں۔خواجہ عمران نزیر نے بتایا کہ یہ مہم ملتان کی تمام یونین کونسلز،مظفر گڑھ کی پینتیس ، لودھراں کی اٹھائیس ،خانیوال کی اٹھاسی اور ٹوبہ ٹیک سنگھ کی انتالیس یونین کونسلز میں منعقد کی جا رہی ہے ۔ اگر چہ پنجاب میں سال 2016میں پولیو کا کوئی کیس نہیں ہوا تاہم موحولیاتی نمونے میں وائرس کی موجودگی اس بات کی غمازی کرتی ہے کہ بچوں کو پولیو کا خطرہ ہو سکتا ہے ۔سیکرٹری پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر علی جان خان نے کہا کہ تمام والدین اپنے بچوں کو پولیو کے قطرے ضرور پلائیں ۔ خاص طور پر دوسرے صوبوں سے آنے والے خاندان بچوں کو قطرے ضرور پلوائیں ۔ایمرجنسی آپریشن سینٹر کے کوآرڈی نیٹر ڈاکٹر منیر احمد نے کہا کے گزشتہ سال میں راولپنڈی، لاہور، فیصل آباد ،ملتان اور ڈیرہ غازی خان میں موحولیاتی نمونوں میں وائرس کی موجودگی کی تصدیق ہو چکی ہے اس لیے مہمات کا انعقاد کیا جارہا ہے۔ پاکستان میں سال 2016میں 20پولیو کیسز رپورٹ ہوئے جن میں سے آٹھ سندھ، آٹھ خیبر پختون خواہ،دوبلوچستان اور دو فاٹا سے رپورٹ ہوئے ہیں ۔جبکہ پنجاب سے کوئی کیس رپورٹ نہیں ہوا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -