انتخابات میں دھاندلی کے تصور کو اب ختم ہوجانا چاہیے

انتخابات میں دھاندلی کے تصور کو اب ختم ہوجانا چاہیے

  

کوٹ سلطان(نامہ نگار)جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنر ل لیاقت بلوچ نے نمائندہ سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پانامہ لیکس پر میں شامل تمام افراد کو کٹہرے میں لایا جائے ،2018کے عام انتخابات کو صاف اور شفاف بنانے کے لئے انتخابی اصلاحات نا گزیر ہیں ،الیکشن کمیشن کو مکمل باا ختیارا دارہ بنایا جائے ، انہوں نے کہا کہ پانامہ لیکس میں شامل تمام حکومتی ،اپوزیشن اور بیورو کریسی میں شامل افراد کو کٹہرے میں لایا جائے ،تاکہ احتساب کا عمل بلا تفریق مکمل ہو سکے ،انہون نے کہا کہ پاکستان کے دفاع کی جنگ لڑنے والے لاپتہ افراد کی بازیابی کے لئے فوری اور ہنگامی اقدامات بروئے کار لائے جائیں ،مردم شماری ،ووٹر لسٹیں اور حلقہ بندیاں مکمل طور پر شفاف بنائی جانی چاہیں ،انتخابات میں دھاندلی کے تصور کو اب ختم ہو جانا چاہئے ،دینی مدارس پر دہشت گردی کے الزامات محض بیرونی آقاؤں کو خوش کرنے کے لئے لگائے جاتے ہیں ،ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب خطہ کے باسیوں کے لئے الگ صوبہ وقت کی ضرورت ہے ،انہوں نے کہا کہ حکومتی وزراء کی فوج ظفر موج حکومت کو تحفظ دینے کے بجائے عدالت کی رہنمائی کرے تاکہ قوم پانامہ لیکس کے حقائق جان سکے ،پوری قوم کی نظریں سپریم کورٹ پر لگی ہیں ،انہوں نے کہا کہ حکومت کا پانامہ لیکس سے بچنا مشکل ہے ،ٹرمپ اور مودی کے دباؤ پر کسی فیصلہ کو قوم ہر گز قبول نہیں کرے گی ،اس دوران جماعت اسلامی حلقہ این اے 182لیہ سے جماعت اسلامی کے امیدوار چوہدری اصغر علی گجر ،ضلعی امیر جماعت اسلامی لیہ چوہدری منور حسین اور دیگر رہنما بھی وموجود تھے ۔

لیاقت بلوچ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -