ایکسپورٹرز کے پرانے ریفنڈز کیسز کو نمٹایا جائے ،تاجر

ایکسپورٹرز کے پرانے ریفنڈز کیسز کو نمٹایا جائے ،تاجر

  



اسلام آباد (یوا ین پی )تاجروں نے زور دیا کہ سیلز اور انکم ٹیکس کے ریفنڈز کیسز پہلے آئیے پہلے پائیے کی بنیاد پر حل کرے کیونکہ ایف بی آر نے جو ترجیحات متعین کررکھی ہیں ان کی وجہ سے مسائل پیدا ہورہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار ایکسپورٹرز نے یو ا ین پی کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ایف بی آر نے امتیازی ترجیحات قائم کررکھی ہیں، جن ایکسپورٹرز کے پرانے کیسز ہیں وہ پینڈنگ چلے آرہے ہیں جبکہ نئے کیسز کو نمٹایا جارہا ہے لہذاایکسپورٹرز کے پرانے ریفنڈز کیسز کو بھی نمٹایا جائے ، انہوں نے کہا کہ سیلز ٹیکس اور انکم ٹیکس ریفنڈ میں تاخیر سے برآمد کنندگان اور مینوفیکچررز بری طرح متاثر ہورہے ہیں اور اربوں روپے کے ریفنڈز نہ ملنے کی وجہ سے انہیں سرمائے میں کمی کا سامنا ہے جس کا نتیجہ صنعتی یونٹس کی بندش اور ورکرز کی بے روزگاری کی صورت میں برآمد ہوسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کاروباری شعبے کو پہلے ہی زیادہ پیداواری لاگت سمیت دیگر کئی چیلنجز کا سامنا ہے جبکہ بھاری سرمایہ پھنس جانے سے ان کی مشکلات میں مزید اضافہ ہورہا ہے ، انہوں نے وزیراعظم پر زور دیا کہ وہ اس معاملے کا جائزہ لیں اور جلد سے جلد ریفنڈز جاری کرنے کے احکامات دیں۔

مزید : کامرس