حکیم رفیق احمدصابر مرحوم کی یاد میں ہمدرد سنٹر میں تعزیتی ریفرنس

حکیم رفیق احمدصابر مرحوم کی یاد میں ہمدرد سنٹر میں تعزیتی ریفرنس

لاہور(پ ر) پاکستان ایسوسی ایشن آف ایسٹرن میڈیسن کے زیر اہتمام معروف معالج محقق اور طبی کتب کے مصنف حکیم رفیق احمدصابر مرحوم کی یاد میں ہمدرد سینٹر غازی علم دین شہید لٹن روڈ لاہور میں تعزیتی ریفرنس منعقد ہوا جس سے ممتاز صحافی مجیب الرحمن شامی ، حکیم راحت نسیم سوہدروی ، ڈاکٹر شاہد منیر، ڈاکٹر تنویر قاسم ، محمد نصیرالحق ہاشمی، رانا شفیق پسروری، حکیم حافظ احسان الرحمن، ڈاکٹر جمیل مہروی، طارق عباس چوہدری،حکیم حافظ فضل امین ، حکیم محمد احمد سلیمی، حکیم محمد افضل میواور طبیب جمیل اصغر خضری نے خطاب کرتے ہوئے مرحوم کی علمی ، طبی خدمات کو خراجِ تحسین و عقیدت پیش کیا ۔ مجیب الرحمن شامی نے اپنے خطاب میں کہا کہ حکیم رفیق احمد صابر کی طبی ، علمی اور سماجی خدمات ناقابل فراموش ہیں انہوں نے اپنی پوری زندگی دکھی انسانیت کی بے لوث خدمت میں گزار دی، ان کی اچانک وفات سے شعبہ طب کو شدید دھچکا پہنچا ہے مقررین نے کہا کہ ان کی طبی ، علمی، دینی اور سماجی خدمت ناقابل فراموش اور نئی نسل کے لیے مشعل راہ ہیں ان کی اچانک وفات سے میدانِ طب ایک دیانتدارسپاہی اور ہم ایک اچھے ساتھی سے محروم ہو گئے ہیں۔ ان کی پیم اور طب کے لیے خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی۔ مرحوم حکیم رفیق احمد صابر ثانی نے زندگی بھر طب پاکستان’’قانون مفرد اعضاء(علاج بالغذا)کی ترویج وترقی اور فروغ کے لیے جو گراں قدر خدمات انجام دیں انہیں ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔ مرحوم بیشتر طبی کتب کے مصنف تھے جن میں شوگر ،ہیپا ٹائٹس،مجربات صابر، بچوں کے امراض طب پاکستان ڈاریکٹری ، مردوں کے جنسی امراض ، عورتوں کے جنسی امراض اور مرضیات قابل ذکر ہیں ان کے تحقیق پر مبنی کالم قومی اخبارات اور جرائد میں باقاعدگی سے شائع ہوتے رہے ہیں، مرحوم نہایت خوش اخلاق، ملنسار ، مہمان نواز اور گوناگوں صفات کی حامل شخصیت تھے مرحوم کی وفات سے پیدا ہونے والا خلا کبھی پر نہ ہو سکے گا دیگر مقررین میں حکیم سید ادریس گیلانی ، حکیم حارث نسیم، حکیم عبدالرحیم ہاشمی، حکیم محمد طارق ،حکیم محمد اکرم مغل ،ڈاکٹر ذوالفقار علی سندھو، حکیم توقیر ہاشمی، حکیم غلام رسول کیف، حکیم فہیم احمد ملک اور دیگر شامل تھے جنہوں نے کہا کہ حکیم رفیق احمد صابر میدان طب میں جدید تحقیقات کو قبول کرنے والے اور ترقی وفروغ طب کے لیے تعلیم وتحقیق کوعالمی پیرا میٹرز کے مطابق بنانے کے حامی تھی کاروان شہید حکیم محمد سعید میں نمایاں تھے امراض کی روک تھام کے لیے تعلیم صحت کے لیے بہت کام کیا وہ نظریاتی اور علمی شخص تھے فکری طور پر بلند سطح پر تھے ۔ جماعت اہلحدیث کے لیے ان کی خدمات زیادہ ہیں آخر میں مرحوم کی مغفرت اور بلندی درجات کے لیے دعا مانگی گئی اللہ تعالیٰ مرحوم کو جنت الفردوس میں جگہ عنایت فرمائے اور پسماندگان کو صبر دے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1