2018ء : سال کے پہلے 41دنوں میں 2کمسن بچوں سمیت 20 افراد ٹریفک حادثات کی نذر

2018ء : سال کے پہلے 41دنوں میں 2کمسن بچوں سمیت 20 افراد ٹریفک حادثات کی نذر

  



لاہور(خبر نگار)رواں سال کے پہلے 41دنوں میں دو کم سن بچوں سمیت 20افراد ٹریفک حادثات میں جاں بحق ہوئے، جبکہ 1039 افراد زخمی ہوئے جس میں دس مقامات پر وارڈنز تعینات نہ ہونے کے باعث پیش آئے۔ پولیس 11 واقعات میں ملزمان کو گرفتار نہیں کر سکی ہے۔ جس سے شہروں کی قیمتی جانیں ضائع ہوئی ہیں، اس میں 28جنوری کی صبح بھٹہ چوک کے قریب رنگ روڈ کے سامنے ایک گاڑی نے موٹر سائیکل سوار تین کم سن بچوں کے باپ 48سالہ شہزاد کو کچل کر ہلاک کیا، جس میں اسی تیز رفتارگاڑی نے راہ گیر 9سالہ طالبعلم کو بھی اپنے ٹائروں تلے کچلا، سندر روڈ پر ٹریکٹر ٹرالی کے ڈرائیور نے دو موٹر سائیکل سوار مزدوروں جبکہ کاہنہ گجومتہ کے قریب بھی ٹریکٹر ٹرالی کے ڈرائیور نے دو نوجوانوں کی جانیں لیں اسی طرح ہربنس پورہ رنگ روڈ کے قریب ٹرک نے جبکہ مغل پورہ چونگی روڈ پر تیز رفتار ٹرالہ نے ایک کمسن بچی کی ماں شمیم بی بی کی جان لی۔’’پاکستان‘‘ کی رپورٹ کے مطابق پیش آنے والے جانی حادثات کے مقامات پر وارڈنز تعینات نہیں ، شہروں کا کہنا ہے کہ اگر وارڈنز تعینات ہوتے تو شاید یہ حاثات پیش نہ آتے۔

مزید : علاقائی