اگلے وزیراعظم آپ ہونگے ، چیف جسٹس ، کیوں میری نوکری کے پیچھے پڑ گئے ہیں ، شہباز شریف

اگلے وزیراعظم آپ ہونگے ، چیف جسٹس ، کیوں میری نوکری کے پیچھے پڑ گئے ہیں ، ...

  



لاہور(نامہ نگار ) چیف جسٹس پاکستان ثاقب نثار نے صاف پانی کیس کی سماعت میں ریمارکس دئیے کہ میرا خیال ہے شہباز شریف اگلے وزیر اعظم ہوں گے، کیا میں ٹھیک کر رہا ہوں؟ ، آپ ایک لیڈر ہیں، میں جانتا ہوں آپ اگلے مورچوں پر لڑنے والے ہیں،ایک آپ ہی تو ہیں جو عدالت کا احترام کر رہے ہیں، آپ کو عدالت میں خوش آمدید کہتے ہیں اور آپ کی آمد پر مشکور ہیں،میاں صاحب عوامی شخصیت بنیں اور عوام میں آئیں،پولیس اہلکاروں نے کیوں آپ کو ڈرا کر رکھا ہے،تین دفعہ میں یہ بات کہہ رہا ہوں عدلیہ نے صاف شفاف الیکشن کروانے ہیں، تعلیم اور صحت کے مسائل میں سپریم کورٹ آپ کی معاونت کرے گی۔وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے صاف پانی کی فراہمی کے حوالے سے جامع منصوبہ پیش کرنے کیلئے 3 روز کی مہلت مانگ لی۔ عدالت نے وزیراعلیٰ پنجاب کو تین ہفتے کی مہلت دیدی۔اتوار کوسپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں جسٹس منظور احمد ملک اور جسٹس اعجاز الاحسن پر مشتمل تین رکنی بنچ نے صاف پانی کیس کی سماعت کی۔ وزیراعلی پنجاب شہباز شریف، ترجمان پنجاب حکومت ملک احمد خان، ڈی جی فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل پیش ہوئے۔دوران سماعت سپریم کورٹ کے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار اور وزیراعلی پنجاب شہباز شریف کے درمیان دلچسپ مکالمہ ہوا۔ چیف جسٹس نے وزیر اعلی پنجاب سے استفسار کیا کہ کیا میں ٹھیک کر رہا ہوں؟۔وزیر اعلی اپنی نشست پر کھڑے ہو گئے اور بولے جی آپ ٹھیک کر رہے ہیں، اگر میں کچھ بولا تو حکم عدولی ہو جائیگی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ آپ حکم عدولی نہیں کر سکتے، آپ ایک لیڈر ہیں، میں جانتا ہوں آپ اگلے مورچوں پر لڑنے والے ہیں، ایک آپ ہی تو ہیں جو عدالت کا احترام کر رہے ہیں۔چیف جسٹس نے بطور وزیراعلی شہباز شریف کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا کہ آپکو عدالت میں خوش آمدید کہتے ہیں اور آپ کی آمد پر مشکور ہیں، میاں صاحب عوامی شخصیت بنیں اور عوام میں آئیں، پولیس اہلکاروں نے کیوں آپ کو ڈرا کر رکھا ہے، ہم جانتے ہیں آپ ہماری بہت عزت کرتے ہیں، ایک آپ ہی تو ہیں جو اکیلے عدلیہ کی عزت کررہے ہیں۔شہباز شریف نے کہا کہ ہم نے عدلیہ کی آزادی کیلئے جدوجہد کی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ میاں صاحب آپ یہ بات اپنی پارٹی کو بھی سمجھائیں، ہم صاف اور شفاف الیکشن کروائیں گے، میرا خیال ہے کہ اگلے وزیر اعظم آپ ہونگے۔ شہباز شریف نے جواب دیا کہ آپ میری نوکری کے پیچھے کیوں پڑ گئے ہیں۔ اس پر کمرہ عدالت میں لوگوں نے قہقہے لگائے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ تین دفعہ میں یہ بات کہہ رہا ہوں کہ عدلیہ نے صاف شفاف الیکشن کروانے ہیں، تعلیم اور صحت کے مسائل میں سپریم کورٹ آپ کی معاونت کرے گی۔شہباز شریف نے کہا کہ ہم نے درجنوں ترقیاتی منصوبے سمیت کول پاور پلانٹ لگائے ہیں، جسٹس اعجاز الحسن نے کہا کہ کیا کول پاور پلانٹ کے باعث ماحولیاتی آلودگی میں اضافہ نہیں ہوگا۔ شہباز شریف نے جواب دیا کہ ماحولیاتی آلودگی کو روکنے کیلئے خاطر خواہ انتظامات کر رہے ہیں، ہر پراجیکٹ پر اربوں ڈالرز خرچ ہوتے ہیں، ہم اس بات کو بھی مد نظر رکھتے ہیں کہ کم لاگت میں اس کو کیسے پورا کریں۔چیف جسٹس نے صوبائی وزیر رانا مشہود کی جانب سے ایڈوکیٹ جنرل پنجاب کے کان میں سرگوشی کرنے پر سرزنش بھی کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعلی کی موجودگی میں جو وزراء پھرتیاں دکھائیں مجھے اچھے نہیں لگتے۔چیف جسٹس نے گندہ پانی دریائے راوی میں پھینکنے کے حوالے سے واٹر ٹریٹمنٹ سے متعلق اقدامات کی رپورٹ کیلئے وزیراعلی پنجاب کو تین ہفتے کا وقت دیدیا۔

صاف پانی کیس

لاہور(خصوصی رپورٹ)وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہاہے کہ عوام کی خدمت ہمارا اوڑھنا بچھونا ہے ۔مسلم لیگ (ن) کی حکومت کھوکھلے نعروں نہیں بلکہ عملی اقدامات پر یقین رکھتی ہے۔ پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے دل وجان سے عوام کی خدمت کی ہے۔قیام امن ، توانائی بحران کا خاتمہ اور ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنا ہماری عوامی خدمت کی روشن مثالیں ہیں۔عوام کی فلاح و بہبود کے ہر منصوبے پر پیش رفت کی ذاتی طو رپر نگرانی کر رہا ہوں۔ میری ہر سانس ملک وقوم کیلئے وقف ہے اور عوام کی خدمت کے لئے اپنا خون پسینہ بہایا ہے۔ عوامی خدمت کے سفر کو رکاوٹوں کے باوجود تیزی سے آگے بڑھایا ہے۔ وزیراعلی محمد شہبازشریف نے ان خیالات کا ا ظہار آج یہاں پاکستان مسلم لیگ(ن) سے تعلق رکھنے والے اراکین اسمبلی کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔وزیراعلی نے کہاکہ مسلم لیگ (ن) کا دور شفافیت، خدمت اور دیانت کا دور ہے اورگزشتہ ساڑھے چار برس میں ملک نے جتنی ترقی کی ہے اس کی مثال ماضی میں نہیں ملتی ۔میٹروبس سروس اور اورنج لائن میٹروٹرین جیسے منصوبے وسائل عوام پر صرف کرنے کی اعلیٰ مثالیں ہیں۔ماضی کے مقابلے میں مسلم لیگ (ن) نے برق رفتاری سے منصوبے مکمل کئے ہیں اورہم ترقی یافتہ،خوشحال،پرامن اورروشن پاکستان کی منزل کی جانب تیزی سے بڑھ رہے ہیں ۔عوام کی فلاح و بہبود کے منصوبوں کو شفافیت ، معیار اور برق رفتاری سے مکمل کر رہے ہیں۔ رکاوٹوں کے باوجودملک کی ترقی اورعوام کی خوشحالی کے سفر کو تیزی سے آگے بڑھایا ہے ۔ ترقی و خوشحالی کے ایجنڈے کو پوری قوت سے آگے بڑھاتے رہیں گے۔ انہوں نے کہاکہ شفافیت اور میرٹ کے کلچر کو فروغ دیا گیا ہے ،ہمارے ترقیاتی منصوبے شفافیت ، معیاراور برق رفتاری سے تکمیل کے اعلی شاہکار ہیں۔بین الاقوامی ادارے پاکستان میں کرپشن کی کمی اورشفافیت میں اضافے کا اعتراف کررہے ہیں ۔پاکستان میں کرپشن میں کمی اور شفافیت میں اضافہ موجودہ حکومت کا کریڈٹ ہے اور بین الاقوامی اداروں نے بھی موجودہ حکومت کی شفافیت کی پالیسیوں پر مہر تصدیق ثبت کی ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے سماجی شعبوں میں انقلاب برپا کیا ہے۔تعلیم ،صحت اوردیگرشعبوں کی ترقی کے لئے بے مثال اقدامات کیے گئے ہیں۔ متوازن ترقیاتی حکمت عملی کے تحت کم ترقی یافتہ علاقوں میں بھی ترقیاتی منصوبے ترجیحی بنیادوں پر مکمل کئے گئے ہیں۔جنوبی پنجاب کی ترقی اورترقیاتی منصوبوں کی تکمیل اولین ترجیح ہے اور جنوبی پنجاب کی ترقی کیلئے اربوں روپے صرف کیے جارہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں معیاری طبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے جدید آلات فراہم کے گئے ہیں ۔ملتان میں اسٹیٹ آف دی آرٹ برن یونٹ قائم کیاگیاہے۔ ملتان میں میٹروبس سروس سے عوام مستفید ہورہے ہیں ۔اربوں روپے کی مظفرگڑھ سے ڈیرہ غازی خان دورویہ سڑک کی تعمیر تیزی سے جاری ہے اور خانیوال سے لودھرا ں تک دورویہ سڑک کے منصوبے پر بھی برق رفتاری سے کام ہورہاہے۔ہمارا ہر قدم عوام کی فلاح و بہبود کیلئے اٹھ رہا ہے اور عام آدمی کی فلاح و بہبود اور معیار زندگی بلند کرنے کیلئے ٹھوس پروگرامز پر عملدرآمد کیا جا رہا ہے۔

مزید : صفحہ اول /رائے