معروف اداکار قاضی واجد کراچی میں انتقال کر گئے

معروف اداکار قاضی واجد کراچی میں انتقال کر گئے

 کراچی(سٹاف رپورٹر،فلم رپورٹر)پاکستان کے معروف سینئر اداکار قاضی واجد کراچی میں انتقال کرگئے۔ پاکستان کے مشہور و معروف لیجنڈ اداکار قاضی واجد کراچی میں انتقال کرگئے ہیں۔ خاندانی ذرائع کے مطابق قاضی واجد کو بظاہر کوئی بیماری نہیں تھی لیکن گزشتہ رات انہیں دل میں تکلیف کے باعث گلشنِ اقبال کے نجی ہسپتال منتقل کیا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکے۔ قاضی واجدکو نماز جنازہ کے بعد عیسی نگری قبرستان میں سپردخاک کر دیا گیا۔قاضی واجد 26 مئی 1930 کو پیدا ہوئے، انہوں نے اپنی فنی زندگی کا آغاز ریڈیوپاکستان سے بطور ڈرامہ آرٹسٹ کیا اور اپنے 65 سالہ فنی کیریئر میں سیکڑوں ڈراموں، ٹی وی تھیٹر سمیت فن کے تمام شعبوں میں اپنی خدمات انجام دیں، حکومتِ پاکستان نے 1988 میں انہیں صدارتی تمغہ برائے حسنِ کارکردگی سے نوازا۔ قاضی واجد کے مشہور ڈراموں میں خدا کی بستی، حوا کی بیٹی، تنہائیاں، پل دو پل اور تعلیم بالغاں شامل ہیں۔انہوں نے پاکستان ڈرامہ انڈسٹری کی کئی نامور شخصیات کے ساتھ کام کیا جن میں معین اختر، جاوید شیخ، راحت کاظم، قوی اور دیگر شامل ہیں۔انہیں اردو ادب سے بے حد لگاؤ تھا اور اکثر قاضی واجد اردو ادب کی محفلوں میں شرکت کیا کرتے تھے۔ ۔شوبز کے مختلف شعبوں سے وابستہ شخصیات نے قاضی واجد کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔وزیراعلیٰ شہباز شریف ،مریم اورنگزیب ،سہیل احمد،شاہدہ منی،سہراب افگن،محمد قوی خان،بہروز سبزواری،حاجی عبد الرزاق،ڈاکٹر اجمل ملک،امین اقبال،عرفان کھوسٹ،ظفر عباس کھچی،میگھا،مدیحہ اشرف،شوکت چنگیزی،مسعود اختر،اچھی خان،اشرف خان،خالد بٹ،راشد محمود،محمد سلیم بزمی،لائبہ علی،راجو سمراٹ ،شہزاد رضا،ہاشم بٹ،اسلم شیخ،جاوید شیخ ،سلیم شیخ،رشید علی،آغا حیدر،عباس باجوہ،خرد حیات،ناصر چنیوٹی،عمران احمد،اشعر اصغر،رزکمالی،عاصم علی،عمران اشرف،ارشد چوہدری،ملک طارق،جیابٹ اور ضیاء خان نے کہا ہے کہ ایسے باکمال فنکار صدیوں میں پیدا ہوتے ہیں۔

مزید : صفحہ اول /رائے