کاشتکاروں کا شوگر ملز مالکان کیخلاف رقص کرتے احتجاجی مظاہرہ ‘ گیٹ پر دھرنا دیدیا

کاشتکاروں کا شوگر ملز مالکان کیخلاف رقص کرتے احتجاجی مظاہرہ ‘ گیٹ پر دھرنا ...

  



خان پور ‘ جیٹھہ بھٹہ ( تحصیل رپورٹر ‘ نمائندہ پاکستان ‘ سٹی رپورٹر ‘ نامہ نگار )کاشتکاروں کا حمزہ شوگر کیخلا ف مل انوکھا احتجاج پرمٹ نہ ملنے اور گنے کی کٹوتی پر ڈانس کر کے حمزہ شوگر مل کے باہر 4 گھنٹے دھرنا دیا اس موقع پر کسان اتحاد کے رہنما طارق نذیر ، عامر غنی و دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ(بقیہ نمبر41صفحہ12پر )

کسانوں کا معاشی قتل کیا جا رہا ہے کسانوں کے ساتھ نا انصافی کی جا رہی ہے چھوٹے زمینداروں کو پرمٹ نہیں دیے جا رہے جس کی وجہ سے آئے روز احتجاج ہو رہے ہیں کسان ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں اور اس ریڑھ کی ہڈی کو ہی توڑا جا ریا ہے کسانوں کے گنے سے ناجائز کٹوتی کی جا رہی ہے اور پرمٹ کی منصفانہ تقسیم نہیں کی جا رہی جس کی وجہ سے کسان پریشان یے اور فیکٹری کا بند کر دیا یے جب تک مطالبات نہیں مانیں جائیں گے شوگر مل کو نہیں چلنے دیا جائے گا اور گیٹ بھی نہیں کھولا جائے گا اس موقع پر سرکل خان پور کی پولیس نفری تھانہ سٹی اور تھانہ صدر اور تھانہ ظاہر پیر کی پولیس پہنچ گئی دھرنا کے مظاہرین سے اسسٹنٹ کمشنر احمد رضا اور مل انتظامیہ سے مذاکرات کیے۔ اور کسانوں کے مطالبات مان لیے اور گنا 180 روپے فی من اور کسی قسم کی کٹواتی نہیں کی جائے گی اور غیررجسٹر ورائٹی پر کٹوتی کی جائی گئی اور اس کے علاوہ پرمٹ کے ایشو پر ایک کمیٹی بنا دی گئی ہے جو تمام سرکلوں کا سروے کریں گے اور جس کے بعد جس پرمٹ پر گنا زیادہ ہو گا اس کو پرمٹ زیادہ ملے گا اور تمام تر زمیداروں کا گنا خرایدا جائے گا اسسٹنٹ کمشنر احمد رضا کی مل انتظامیہ سے مشاورت کے بعد مین گیٹ کھول دیا گیا ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر