مذہب عسائیت کی توہین ،لبنانی جج کا 3مسلم نوجوانوں کو’’ سورۃ آل عمران ‘‘ حفظ کرنے کا حکم 

مذہب عسائیت کی توہین ،لبنانی جج کا 3مسلم نوجوانوں کو’’ سورۃ آل عمران ‘‘ حفظ ...
مذہب عسائیت کی توہین ،لبنانی جج کا 3مسلم نوجوانوں کو’’ سورۃ آل عمران ‘‘ حفظ کرنے کا حکم 

  



بیروت(آن لائن) شمالی لبنان کی عیسائی جج خاتون نے عیسائی مذہب کی توہین کے الزام میں زیر حراست 3 مسلم نوجوانوں کو جیل بھیجنے کے بجائے ’’ سورۃ آل عمران‘‘ حفظ کرنے کا حکم دے دیاہے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق لبنان کی ایک مقامی عدالت میں مذہب عیسائی کی توہین کرنے والے نوجوانوں سے متعلق سماعت ہوئی،دوران سماعت فاضل جج نے مسلم نوجوانوں کو جیل بھیجنے کی بجائے قرآن پاک کی سورۃ (آل عمران) حفظ کرنے کا حکم نامہ جاری کردیا،عیسائی جج کے اس فیصلے کے بعد 3مسلم نوجوانوں کی شکلیں دیکھنے سے تعلق رکھتی تھیں۔ مسلم نوجوان خاتون عیسائی جج کے سامنے قرآن کریم ہاتھوں میں لئے کھڑے تھے۔ہر ایک سورۃ آل عمران کی تلاوت کر رہا تھا۔ جج خاتون ان کی رہائی کا حکم دینے سے قبل یہ اطمینان حاصل کرنا چاہتی تھیں کہ یہ نوجوان سچ مچ’’ سورۃ آل عمران‘‘ حفظ کر بھی سکیں گے یا نہیں؟ لبنانی حلقوں میں عیسائی جج خاتون کے فیصلے پر انتہائی خوشگوار ردعمل آیا۔ اس سے مذاہب کے درمیان رواداری کی قدروں کو فروغ ملے گا۔ لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے بھی فیصلے پر پسندیدگی کا اظہار کیا ہے۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی