قتل مقدمات میں ملوث 2 ملزموں کا جسمانی ریمانڈ منظور

قتل مقدمات میں ملوث 2 ملزموں کا جسمانی ریمانڈ منظور

ملتان (خبر نگار خصو صی ) جوڈیشل مجسٹریٹ ملتا ن نے قتل کے مقدمات میں ملوث 2 ملزمان کا مزید 3,3 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کرنے(بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

کا حکم دیا ہے۔ فاضل عدالت میں پولیس تھانہ بی زیڈ کے مطابق ملزم محسن طارق کے خلاف شہری محمد حنیف نے بیٹے صدیق حسین کوقتل کرنے کا مقدمہ درج کرایا تھا کہ اس کا بیٹا جامعہ زکریا میں تعلیم حاصل کررہا تھا اور اپنے کسی کام سے نجی ہاسٹل جارہا تھا کہ ملزم نے اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ بیٹے کو روکا اور مزاحمت پرچھری کے وار کئے جو زخموں کی تاب نا لاتے ہوئے دم توڑ گیا تھا ، جس پر ملزم کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے اور ملزم سے دیگر ساتھیوں سے متعلق تفتیش اور آلہ قتل برآمد ہونا باقی ہے ، دریں اثناء پولیس تھانہ مخدوم رشید کے مطابق ملزم شرافت علی کے خلاف محبوب علی نے مقدمہ درج کرایا کہ اس کا بھتیجا بابر علی اپنے گھر سے ملزم کے پاس اپنی رقم ساڑھے 4 لاکھ وصول کرنے کے لیے گیا تھا لیکن کافی وقت گزرنے کے بعد پولیس نے بذریعہ کال اطلاع دی کے مقتول کو کسی نے قتل کردیا ہے جس پر ملزم اور اس کے 2 نامعلوم ساتھیوں کو مقدمہ میں نامزد کیا گیا ہیملزم سے مقدمہ کی تفتیش ہونی باقی ہے اس لیے جسمانی ریمانڈ منظور کرنے کا حکم دیا جائے۔

منظور

مزید : ملتان صفحہ آخر