عاصمہ جہانگیر کی پہلی برسی پر ہائیکورٹ بار میں تقریب کا انعقاد

عاصمہ جہانگیر کی پہلی برسی پر ہائیکورٹ بار میں تقریب کا انعقاد

لاہور(نامہ نگارخصوصی)انسانی حقوق کی علمبرداراور سپریم کورٹ بار کی سابق صدر عاصمہ جہانگیر مرحومہ کی پہلی برسی کے موقع پر ان کی یاد میں لاہورہائی کورٹ بار میں تقریب منعقد کی گئی،جس میں وکلاء ،لاہور ہائی کورٹ کے ججزجسٹس فیصل زمان، جسٹس شاہد کریم ،جسٹس شہرام سرور ، جسٹس علی باقر نجفی اور جسٹس شمس محمود مرزاکے علاوہ سویڈن کی سفیر انگرڈ جوہانسن بھی شریک ہوئیں،تقریب سے عاصمہ جہانگیر کی بیٹیوں منزہ جہانگیر اور سلیمہ جہانگیر نے بھی خطاب کیا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر جسٹس علی باقر نجفی نے کہا کہ عاصمہ جہانگیر نے انسانی حقوق اور جمہوریت کے لئے کام کیا،ان کی آزاد عدلیہ کے لئے جدوجہد یادرکھی جائے گی،عاصمہ جہانگیر نے کرپشن کے خاتمے کے لئے اہم کام کئے،ان پرکسی قسم کی کرپشن کا الزام نہیں تھا،عاصمہ جہانگیر کی صاحبزادی سلیمہ جہانگیر نے کہاکہ عاصمہ جہانگیر کا ایک خاندان ہائیکورٹ میں ہے،سب سے زیادہ وقت انہوں نے وکلاء کے ساتھ گزارا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عاصمہ جہانگیر کی دوسری بیٹی منزہ جہانگیر نے کہا کہ لوگ پوچھتے ہیں عاصمہ جہانگیر کا خلا کون پر کرے گا،لوگوں کے خلا پر نہ ہونے کے بیان پر دکھ ہوتا ہے، اگر وہ ہوتیں تو ماورائے عدالت قتل اورمیڈیا کے ساتھ زیادتیوں پر آواز اٹھاتیں،مجھے امید ہے کہ یہ خلا آنے والے وقت میں ضرور پرہو گا۔پاکستان بار کونسل کے رکن محمد احسن بھون نے کہا کہ محترمہ کی ذات کا حسن ہے کہ تمام سیاسی جماعتوں کے نمائندے موجود ہیں،بڑے عہدوں پر چھوٹے لوگ بیٹھے ہوئے ہیں،وہ چھوٹے جسم کے ساتھ پہاڑوں سے بلند حوصلے رکھتی تھیں۔

مزید : علاقائی