مصر، ایک ہی خاندان کے پانچ افراد کا قتل معمہ بن گیا

مصر، ایک ہی خاندان کے پانچ افراد کا قتل معمہ بن گیا

  



قاہرہ(آئی این پی) مصر میں پانچ افراد کا قتل پولیس کیلیے معمہ بن گیا، ایک ہی خاندان کے پانچ افراد کی پھانسی زدہ لاشیں ملی تھیں۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق قتل کی یہ واردات مصر کے شمالی علاقے کی البحیرہ کمشنری میں پیش آئی جہاں ایک گھر سے پانچ افراد کی پھندا لگی لاشیں برآمد ہوئیں تھی۔پولیس کو اطلاع ملی تھی کہ ایک گھر میں پانچ افراد کی لاشیں موجود ہیں، جس کے بعد پولیس نے گھر کا گھیرا ؤکرکے تلاشی لی تو اندر سے پھندے سے پانچ لاشیں لٹک رہی تھیں۔پولیس نے پوسٹ مارٹم کے بعد لاشوں کو سردخانے منتقل کروادیا تھا تاہم پولیس اس معمے کو ابھی تک حل کرنے میں ناکام ہے کہ ان سب لوگوں کو قتل کیا گیا ہے یا انہوں نے اجتماعی خودکشی کی ہے۔یاد رہے کہ گزشتہ برس مصر میں ایک چرچ کے 54 سالہ خادم کمال نے چرچ کے نگراں 65 سالہ پادری مقار سعد کو گولیاں مار کر قتل کردیا تھا، ایک گولی پادری کے سر میں لگی جس کے نتیجے میں وہ فوری طور پر ہلاک ہوگیا تھا۔ڈائرکٹریٹ نے انکشاف کیا تھا کہ یہ واقعہ وعدہ خلافی پر پیش آیا تھا، مقتول پادری نے چرچ کے خادم سے وعدہ کیا تھا کہ وہ اس کی بیٹیوں کی شادی پر مدد کرے گا اور خادم کو مالی رقوم بھی دے گا۔

مزید : علاقائی