ملک کو بچانے کیلئے عمران خان سے جان چھڑانا ہوگی، غلام احمدبلور

    ملک کو بچانے کیلئے عمران خان سے جان چھڑانا ہوگی، غلام احمدبلور

  



پشاور(پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے سنیئر رہنما حاجی غلام احمد بلور نے کہا ہے کہ ملک میں عمران خان نیازی اور اس کے حواریوں سے بڑا کوئی مافیا نہیں ہے، ملک کی معیشت کو تباہ اور برباد کرنے میں انکا سب سے بڑا ہاتھ ہے، غلط اقدامات اٹھاکے اس ملک کو مزید دیوالیہ کرنے کی جانب لے جایا جارہا ہے۔باچا خان مرکز پشاور سے جاری اپنے بیان میں حاجی غلام احمد بلور نے کہا کہ ملک میں مہنگائی اور بے روزگاری ی تمام تر وجہ حکومت کی غلط پالیسیاں ہیں۔ اگر سلیکٹڈ حکومت بجلی،گیس، پیٹرول اور ڈالر پچھلے حکومت کی ریٹ پر لے آئیں تو تمام تر مہنگائی خود بخود ختم ہوجائی گی۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے الیکشن سے پہلے کہا تھا کہ روزانہ ملک سے دس ارب روپے باہر جارہے ہیں اور دس ارب کی کرپشن ہورہی ہے اور اگر ان کی حکومت آئی تو ایک دن میں بیس ارب ڈالر کی بچت ہوگی جو کہ ایک ماہ میں چھ سو ارب روپے بنتا ہے۔ انہوں نے سوال کیا کہ عمران خان کی حکومت میں آنے کے بعد وہ جو بچت ہوئی ہے وہ کون کھا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک مشہور مقولہ ہے کہ جھوٹ کے پاؤں نہیں ہوتے، عمران خان اور ان کی حکومت مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے۔ میری اس کمیٹی سے استدعا ہے جس کمیٹی نے نیازی اور اس کی ٹیم کو سلیکٹ کیا تھا کہ اپنے فیصلے پر نظرثانی کریں۔ آپ کی سلیکٹ کی ہوئی ٹیم ہر لحاظ سے ناکام ہوچکی ہے اور اگر یہ حکومت مزید ایک سال تک رہ گئی تو ملک خدانخواستہ دیوالیہ ہوجائیگا جس کے بعد کچھ بھی نہیں رہے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ اس ملک کو دیوالیہ ہونے سے بچا نے کیلئے پوری قوم کو اٹھنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ذی شعور عوام کو یہ حق دیا جائے کہ وہ اپنے مرضی سے حکومت بنائے جیسے بھارت میں ہوتاہے۔ آج بھارت جو ہمارے ساتھ آزاد ہوا تھا اور اسکی آبادی تقریبا 150 کروڑ ہے وہاں پرڈالر کا ریٹ 72 روپے ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ذی شعور عوام ہی تھی جس نے انگریزوں سے آزادی حاصل کی اور اس ذی شعور عوام نے پاکستان بنایا تھا۔۔ انہوں نے کہا کہ آزادی حاصل کرنے اور پاکستان بنانے میں اسٹیبلیشمنٹ اور عدلیہ کا کوئی کردار نہیں تھا۔آج وہ لوگ حکمران بن بیٹھے ہیں جن کا ملک بنانے میں کوئی کردار ہی نہیں تھا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر